فارماسیوٹیکل ، کمیسٹ تنظیمیں ایک بار پھر سامنے آگئیں ،28مارچ سے دوبارہ ہڑتال کا فیصلہ

فارماسیوٹیکل ، کمیسٹ تنظیمیں ایک بار پھر سامنے آگئیں ،28مارچ سے دوبارہ ہڑتال ...

لاہور(جاوید اقبال) فارما سیوٹیکل اورکیمسٹ تنظیمیں ایک بار پھر سامنے آ گئی ہیں، انہوں نے ہڑتال پر جانے کے لئے دوبارہ آپس میں رابطے شروع کر دیئے ہیں ہڑتال کا آغاز لاہور سے کیا جائے گا ، تنظیموں نے محکمہ صحت سے مذاکرات نہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ذرائع کے مطابق تنظیموں نے 28مارچ سے دوبارہ ہڑتال پر جانے کا فیصلہ کیاہے جس کا باقاعدہ اعلان 22 مارچ کو تنظیموں کی مشترکہ ایکشن کمیٹی کے چیئرمین اور کنوینر کریں گے اسکے لئے ایکشن کمیٹی نے فارما سے متعلقہ 14تنظیموں سے رابطے کئے ہیں ،احتجاجی تحریک کا آغاز لاہور سے کیا جائے گا۔پنجاب کیمسٹ کونسل کے صدر نثار احمد چودھری اور ایکشن کمیٹی کے چیئرمین حامد رضا نے اس کی تصدیق کر دی ہے یہ احتجاجی تحریک 2روز قبل نئے پنجاب ڈرگ ایکٹ کے تحت سلیم میڈیکل سٹور کے مالک کے خلاف درج کئے گئے مقدمے کے خلاف شروع کی جا رہی ہے۔ ایکشن کمیٹی کا کہنا ہے کہ محکمہ صحت نے معاہدہ کی خلاف ورزی کی ، ایک طرف مذاکرات کا ڈھونگ رچایا جا رہا ہے دوسری طرف چھوٹے اور غریب مالکان کے خلاف مقدمہ درج کرانے کا سلسلہ شروع کر دیا گیا جسے ہم مسترد کرتے ہیں ۔حکومت پر واضح کر دیا ہے کہ نئے ایکٹ کے تحت درج کیا گیا مقدمہ اگلے 2روز میں واپس نہ لیا تو پنجاب کیمسٹ کونسل ہول سیلرز پنجاب فارماسیوٹیکل انڈسٹری میڈیکل سٹورز ،فارمیسیاں 28مارچ سے بند کر دی جائیں گی ۔ کیمسٹ کونسل کے صدر نثار چودھری کا کہنا ہے کہ سلیم میڈیکل سٹور سے لوکل ویاگرا کی صرف 3گولیاں پکڑی گئیں ۔مالک نے حلفیہ بیان دیا کہ یہ گولیاں انہوں نے ذاتی استعمال کے لئے رکھی ہیں مگر ڈرگ انسپکٹر نے ان پر مقدمہ درج کر ا دیا اس کالے قانون کو مسترد کرتے ہیں۔ ہمارے احتجاج پر آج شام کو دونوں وزرائے صحت اور سیکرٹری صاحبان نے مذاکرات کے لئے پی ایم او کے آفس میں مذاکرات کی دعوت دی ہے مگر مذاکرات شروع کرنے سے پہلے محکمہ صحت کو درج کرایا گیا بے بنیاد مقدمہ واپس لینا ہو گا ورنہ مذاکرات نہیں کریں گے۔ مقدمہ واپس لینے کے لئے حکومت کو 26مارچ کی ڈیڈ لائن دیں گے اور پورے لاہور کے 7ہزار سے زائد میڈیکل سٹور اور فارمیسیاں بند کر دیں گے ۔فارماسیوٹیکل انڈسٹریل بند ہو گی ۔اس حوالے سے وزیر صحت ، پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ خواجہ عمران نذیر کا کہنا ہے کہ ایسوسی ایشن جلد بازی نہ کرے معاملے کی تحقیقات ہوگی،مذاکرات ہی مسئلے کا حل ہے لیکن یہ طے ہے کہ کسی کو عوام کی صحت سے نہیں کھیلنے دیں گے جعلی سمگل شدہ ادویات کی فروخت کسی بھی حال میں منظور نہیں ایسے دھندا کرنے والے انسانیت کے قاتل ہیں جنہیں جیلوں میں جانا ہو گا۔

کیمسٹ ۔ ہڑتال

مزید : علاقائی