افراد قتل‘حادثات میں 3جاں بحق‘ 3نے خو د کشی کرلی

افراد قتل‘حادثات میں 3جاں بحق‘ 3نے خو د کشی کرلی

  



ملتان‘ راجن پور‘ کہروڑ پکا‘جام پور‘ٹھٹھہ صادق آباد‘ رحیم یار خان‘تونسہ شریف (نیوز رپورٹر‘ نمائندگان پاکستان) خاتون سمیت 2افراد کو قتل کردیا گیا حادثات میں 3افراد جاں بحق ہوگئے جبکہ 3نے خود کشی کرلی تفصیل کے مطابق ملتان سے نیوز رپورٹر کے مطابق تھانہ قادر پور راں کے علاقے میں 35سالہ خاتون نے (بقیہ نمبر34صفحہ12پر)

ایک سالہ بچی کے ہمراہ کنویں میں چھلانگ لگادی، دونوں جاں بحق ہوگئے ہیں۔ تفصیل کے مطابق موضع اٹھنگل چوک کے قریب عفت بی بی نے اپنی ایک سالہ بچی کے ساتھ کنویں میں چھلانگ لگادی،واقع کی اطلاع پر ریسکیو1122نے موقع پر پہنچ کر کنویں میں سے مردہ حالت میں ماں اور بچی کی نعش نکال لی،جبکہ خاتون کا گلا کٹا ہواتھا، متعلقہ پولیس نے جائے وقوعہ پر پہنچ کر دونوں نعشیں تحویل میں لیکر پوسٹ مارٹم کے لئے نشتر ہسپتال کے سرد خانے منتقل کرنے کے بعد واقع کی تفتیش شروع کردی ہے۔راجن پور سے ڈسٹرکٹ رپورٹر کے مطابق فاضل پور کی نواحی بستی چک بوسن میں لشاری قوم کے نوجوان نے اپنی ہی برادری کی لڑکی سے عدالت کے ذریعہ پسند کی شادی کرلی جس کالڑکی کے ورثاء کور نج تھا گذشتہ شب مسلح ملز مان نے فائر نگ کرکے نوجوان کوقتل کردیا تھا نہ فاضل پور پو لیس کی جانب سے مقدمہ درج نہ کر نے اور واقعہ میں ملوث ملزمان کی عدم گرفتاری پر مقتول کے ورثاء نے لاش انڈس ہائی وے پررکھ کر احتجاج شروع کردیا جس سے کرا چی سے پشاور جا نے والی انڈس ہائی وے پر مسافر اور مال بردار گاڑیوں کی لمبی قطاریں لگ گئیں ڈی ایس پی کی جانب سے ورثاء کو ہر ممکن کاروائی کی یقین دہا نی پرورثاء منتشر ہو گئے۔کہروڑ پکا سے نمائندہ خصوصی کے مطابق وپڈا کے اے ایل ایم نو یدانورسکنہ بستی پکا نے 9روز قبل اپنی بیوی سحرس کو کلہاڑیوں کے وار کر کے شدید زخمی کر دیا تھا اور خود کو کچن میں گیس چھوڑ کر آگ لگا کرخود کشی کر لی تھی اس کی بیوی سحرش کوانتہا ئی تشو یشناک حا لت میں وکٹوریہ ہسپتال بہا ولپورریفر کر دیا گیا تھا جہاں 9روز تک موت وحیات کی کشمکش کے بعد سحرش بھی دم توڑ گئی سحرش کی نعش اوربچ جا نے وا لے 14ماہ کے بچے کو اس کے وا لدین بہا ولنگر لے گئے وہاں پر تد فین کی جا ئے گی مبینہ ذرا ئع سے معلوم ہوا ہے کہ سحرش بی بی نے ایم اے کیا ہوا تھا اور وہ نو کری کرنا چا ہتی تھی جبکہ نو ید ایک پڑھا لکھا نو جوان ہو نے کے با وجود پرا نے خیا لات کا ما لک تھا اور وہ بیوی کو گھر تک محدود رکھنا چا ہتا تھا جس پر دو نوں میاں بیوی کے درمیان چپقلش تھی نوید نے بادل نخواستہ مقا می پرا ئیویٹ سکول میں بیوی کو پڑھا نے کی اجازت بھی دے دی مگر اس اجازت نے اس کو ذہنی مریض بنا دیاتھاجس پر اس نے بیوی کو قتل کر نے کی نیت سے وار کر کے زخمی کر دیا اور خوداس نے خود سوزی کر لی والد کی موت کے بعد اب والدہ بھی دم توڑ گئی14ماہ کے بچے کو ننیال لے گئے اس واقعہ نے بچیوں کی اعلیٰ تعلیم پر سوا لیہ نشان لگا دیا ہے۔ کوٹلہ کے موضع سید پور کے رہاشی عارف حسین ولد سید سجاد حسین شاہ اپنی بیوی اور بچے سید احمد شاہ اٹھ سال عمر کے ساتھ جام پور شہر میں دوائی لینے کے لیے ایا۔ انڈس روڈ پر دوائی لے رہا تھا اور بچہ موٹر سایکل کے ساتھ کھڑا تھا۔ ڈیرہ غازی خان سے ایک منی جیپ جس کو سابق ڈسٹرکٹ اٹارنی ودریشک گروپ کے مقامی رہنماء مہار حبیب الرحمان ولد غوث بخش سیال سکنہ کوٹلہ دیوان چلارہے تھے تیز رفتاری کی وجہ سے گاڑی روڈ کے ساتھ کھڑے ہوئے بچے پر چڑھ گئی جس سے بچہ موقع پر ہلاک ہو گیا۔ پولیس نے متوفی عارف حسین سید کی مدعیت میں گاڑی ڈرائیور مہار حبیب الرحمان سیال کے خلاف مقدمہ نمبر 182/2020زیر دفعہ 322ت۔ پ مقدمہ درج کرکے مزید کاروائی شروع کر دی ہے۔ ٹھٹھہ صادق آبادسے نامہ نگارکے مطابق ٹھٹھہ صادق آباد کے نو۱حی علاقہ کھوہ قریشی و۱لہ کے رہائشی محنت کش۱عظم شاہ کی 8سالہ بچی علیزہ بی بی گلی میں کھیل رہی تھی کہ بجلی کے لگے کھمبے میں ۱چانک سے کرنٹ آگیا۔کرنٹ لگنے سے 8سالہ بچی علیزہ بی

مزید : ملتان صفحہ آخر