روٹھی بیوی پر تیزاب پھینک کر جھلسانے کے مقدمہ میں ملوث ملزم شوہر کا 14 روزہ جسمانی ریمانڈ منظور

روٹھی بیوی پر تیزاب پھینک کر جھلسانے کے مقدمہ میں ملوث ملزم شوہر کا 14 روزہ ...

  



ملتان (کورٹ رپورٹر) انسداد دہشت گردی کی عدالت نمبر دو ملتان نے روٹھی بیوی پر تیزاب پھینک کر جھلسانے کے مقدمہ میں ملوث ملزم شوہر کا 14 روزہ جسمانی ریمانڈ (بقیہ نمبر36صفحہ12پر)

منظور کرنے کا حکم دیا ہے۔ فاضل عدالت میں پولیس تھانہ گلگشت کے مطابق ملزم جمشید کے خلاف خاتون رقیہ بی بی نے 12مارچ کو مقدمہ درج کرایا تھا جس میں الزام عائد کیا گیا کہ وہ شوہر سے ناراضگی کی وجہ سے اپنے والدین کے گھر آئی ہوئی تھی کہ رات کے وقت اس کا شوہر والدین کے گھر آیا اور ساتھ جانے کو کہا جس پر مدعیہ نے انکار کردیا تو شوہر نے بوتل میں موجود تیزاب اس پر پھینک دیا جس سے اسکی ٹانگیں اور جسم کئی جگہ سے جھلس گیا تھا۔ اس لیے ملزم سے ابھی تفتیش اور برآمدگی ہونی باقی ہے اس لیے جسمانی ریمانڈ کی استدعا منظور کی جائے۔ ملزم کے وکیل نے موقف اختیار کیا کہ مدعیہ کی والدہ داماد سے پیسے ہتھیانا چاہتی ہے اور پیسے نہ دینے کی رنجش میں یہ جھوٹا وقوعہ بنایا گیا ہے۔ مدعیہ برن یونٹ سے ایک ہی روز بعد واپس گھر چلی گئی تھی۔ تاہم عدالت نے موقف سننے کے بعد قرار دیا کہ پولیس نے پبلک پراسیکیوٹر کی عدم موجودگی بارے بتایا ہے اور ریمانڈ تفتیشی افسر نے پیش کیا ہے۔ اس میں کوئی شک نہیں کہ مدعیہ کا طبی معائنہ ہوا ہے جو کہ زخمی ہے۔ ملزم کے خلاف تحقیقات ایس ایس پی انویسٹیگیشن سے منتقل ہوئی ہیں۔ ملزم کے خلاف شواہد اکھٹے کرنے کے لیے پولیس کی استدعا منظور کرتے ہوئے جسمانی ریمانڈ منظور کیا جاتا ہے۔تاکہ حقائق بارے معلوم ہوسکے۔

جسمانی ریمانڈ

مزید : ملتان صفحہ آخر