ریلوے کا کرونا وائرس سے بچاؤ کیلئے 34مسافر ٹرینیں بند،ٹکٹس ری فنڈ کرنے کا اعلان

ریلوے کا کرونا وائرس سے بچاؤ کیلئے 34مسافر ٹرینیں بند،ٹکٹس ری فنڈ کرنے کا ...

  



اسلام آباد(سٹاف رپورٹر) وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید احمد نے کہا ہے کہ کرونا وائرس سے بچنے کیلئے 34مسافر ٹرینوں کو بند کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے، 12ٹرینیں 22مارچ سے بند کر دی جائیں گی اور باقی یکم اپریل سے بند کی جائیں گی، اگر کوئی اپنی ٹکٹ واپس کروانا چاہتا ہے تو اسے سو فیصد ریفنڈ کی جائے گی اور جو کسی دوسری ٹرین میں سفر کرنا چاہے تو وہ اسی کلاس میں سفر کر سکتے ہیں، ریلوے کے پاس جو آلات دستیاب ہیں اسی سے سکیننگ کی جارہی ہے، ملک کو لاک ڈاؤن نہیں کیا جائے گا جن ممالک نے لاک ڈاؤن کیا ان کو خاطر خواہ نتائج حاصل نہیں ہوئے،ریلوے ہسپتالوں میں کرونا ٹیسٹ کی سہولت میسر نہیں،سوموار اور جمعہ کو لال حویلی میں کچہری لگایا کروں گا،موت کا ایک دن مقرر ہے عزت، ذلت سب اللہ کے اختیار میں ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ وزیراعظم سے ملاقات کے بعد فیصلہ کیاگیا ہے کہ کرونا سے بچاؤ کے لئے 34مسافر ٹرینوں کو بند کیاجائے۔ انہوں نے کہا کہ ٹرینوں کے سٹاپ بڑھا دئیے گئے ہیں، کراچی میں لانڈھی، ملیر، ڈرگ روڈپر تمام ٹرینیں رکا کریں گی جبکہ راولپنڈی کی تمام ٹرینوں چکالہ ریلوے سٹیشن پر رکیں گی۔انہوں نے کہا کہ134مسافراور مال بردار ٹرینیں 12سے 15روزانہ چلتی ہیں۔ راولپنڈی، لاہور، کراچی، پشاور کے ریلوے سٹیشنوں کو صاف کیا جارہا ہے اور ہمارے پاس جو سکیننگ کے آلات موجود ہیں انہی سے سکیننگ کی جارہی ہے، سندھ حکومت کی طرف سے بھی ٹرینیں کم یا بند کرنے کی ڈیمانڈ تھی لیکن ہم اگر ساری ٹرینیں بند کردیں تو ہمارے پاس اتنے وسائل نہیں ہیں کہ اتنے بڑے سسٹم کو چلا سکیں،ہم جو کماتے ہیں وہ سب ریلوے پر ہی خرچ کرتے ہیں، کرونا وائرس پوری دنیا کیلئے بوجھ بن گیا،ہم بھی اس کی لپیٹ میں ہیں جو ٹرینیں ہم بند کرسکتے تھے وہ بند کرینگے۔ انہوں نے کہا کہ پی آئی اے نے اپنا سسٹم بند کیا ہے لیکن اگر ہم بھی تمام ٹرینیں بند کردیں تو عوام کی مشکلا ت میں اضافہ ہوگا۔وفاقی وزیر نے کہا کہ ریلوے اپنے ملازمین کو تنخواہیں وقت پر دے گا اگر ریلوے ملازمین کی پنشن مرکزی حکومت ادا کرنا شروع کردے تو ریلوے کیلئے بہت ساری آسانیاں پید ا ہوجائیں گی۔انہوں نے مزید کہا کہ گزشتہ سال ریلوے کا خسارہ چار ارب روپے کم ہوا اس سال بھی اگر خسارہ کم نہ ہواتو بڑھے گا بھی نہیں۔

شیخ رشید

مزید : صفحہ اول