پنجاب میں کرونا وائرس کی روک تھام کیلئے 5ارب کا خصوصی فنڈ قائم

  پنجاب میں کرونا وائرس کی روک تھام کیلئے 5ارب کا خصوصی فنڈ قائم

  



لاہور(جنرل رپورٹر) وزیراعلیٰ عثمان بزدارنے کرونا وائرس کی روک تھام کیلئے 5 ارب روپے کے خصوصی فنڈ کے قیام کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ حکومت نے محکمہ صحت کو پہلے 23 کروڑ 60 لاکھ روپے جاری کئے اوربعد میں ایک ارب روپے کے وسائل مختص کئے۔کرونا وائرس کی روک تھام اور عوام کی زندگیوں کو محفوظ بنانے کیلئے مزید وسائل بھی دیں گے۔وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے تشخیصی کٹس جلد منگوانے کیلئے ہر ممکن اقدام کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ تشخیصی کٹس کی کمی نہیں ہونی چاہئے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے کرونا وائرس سے نمٹنے سے متعلق قائم کابینہ کمیٹی کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدارنے ماسک اور سینی ٹائزر ذخیرہ کرنے والے مافیا کے خلاف بلاامتیاز کریک ڈاؤن کا حکم دیتے ہوئے کہا ہے کہ ذخیرہ اندوزوں کے خلاف قانون کے مطابق بلاتفریق ایکشن لیا جائے،ماسک اور سینی ٹائزرکے حوالے سے عوام کو شکایت نہیں ہونی چاہئے جبکہ عوام کو لوٹنے والے مافیا کی جگہ جیل ہے۔انہوں نے کہا کہ صوبائی ایپکس کمیٹی میں کئے گئے فیصلوں پر من و عن عملدرآمد یقینی بنایا جائے گا،وزیراعلیٰ پنجاب نے کہا کہ پنجاب حکومت تفتان میں اپنے وسائل سے قرنطینہ مرکز قائم کرنا چاہتی ہے اس حوالے سے متعلقہ محکمے اور ادارے بلوچستان حکومت کے ساتھ رابطے میں رہ کر مزید اقدامات کریں۔ اجلاس میں شاپنگ مالز اور ریسٹورنٹس کو رات 7 یا رات 8 بجے بند کرنے کی تجویزپر غورکیاگیا۔وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے ہدایت کی کہ متعلقہ کمیٹیاں تجویز کا جائزہ لے کر جلدحتمی سفارشات پیش کریں۔انہوں نے کہا کہ موجودہ غیر معمولی حالات میں پی ڈی ایم اے کا کردار لیڈنگ حیثیت کا حامل ہے۔ ڈی جی پی ڈی ایم اے خود فیلڈ میں جا کر صورتحال کا جائزہ لیں۔وزیراعلیٰ، وزیر صحت اور دیگر حکام دورے کر رہے ہیں تو پی ڈی ایم اے کیا کر رہا ہے؟ ڈی جی پی ڈی ایم اے اضلاع کے دوروں کی رپورٹ روزانہ وزیراعلیٰ آفس پیش کریں۔انہوں نے کہا کہ مشکل حالات میں اپنے صوبے کے عوام کو تنہا نہیں چھوڑ سکتے۔وزیراعلیٰ نے کہا کہ گھروں میں سیلف آئسولیشن کے اچھے نتائج سامنے آئیں گے۔سیلف آئسولیشن کے بارے میں عوام کو بھرپور آگاہی دی جائے۔وزیراعلیٰ عثمان بزدارنے ایران سے آنے والے زائرین کے ٹیسٹ کا عمل جلد مکمل کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ عالمی ادارہ صحت کی ہدایات کی روشنی میں حفاظتی اقدامات پر عملدرآمد یقینی بنایا جائے۔انہوں نے کہا کہ ڈیلی ویجز ملازمین کی مالی مشکلات کا اندازہ ہے۔پنجاب حکومت نے اس ضمن میں کمیٹی تشکیل دے دی ہے جو جلد اپنی سفارشات پیش کرے گی۔اجلاس میں گھروں میں بھی شادی کی تقریبات بند کرنے کی تجویزپرغورکیاگیا۔انہوں نے کہا کہ سرکاری دفاتر میں عملے کی تعداد میں بہت کمی کردی گئی۔وزیراعلیٰ نے ہدایت کی کہ ڈاکٹروں، نرسوں اور پیرامیڈیکل سٹاف کیلئے حفاظتی لباس اور دیگر ساز و سامان کی خریداری کا عمل جلد مکمل کیا جائے۔ انہوں نے کہا کہ محکمہ صحت اس ضمن میں کابینہ کمیٹی کو روزانہ کی بنیاد پر رپورٹ پیش کرے۔صوبائی سیکرٹری پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کیئر نے کورونا وائرس کی روک تھام کیلئے کئے جانے والے اقدامات اور ضروری ساز و سامان کی دستیابی اور خریداری کے بارے میں بریفنگ دی۔بعدازاں وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار نے گورنر ہاؤس میں لاہور ہائی کورٹ کے نئے چیف جسٹس مسٹر جسٹس محمد قاسم خان کی تقریب حلف برداری میں شرکت کی۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے حلف برداری کی تقریب کے بعد جسٹس محمد قاسم خان کو لاہور ہائی کورٹ کے چیف جسٹس کے منصب کا حلف اٹھانے پرمبارکباد دی اور ان کیلئے نیک خواہشات کا اظہار کیا۔قبل ازیں وزیراعلیٰ پنجاب نے گورنر چودھری سرور سے بھی ملاقات کی،اس موقع پرکرونا وائرس سمیت دیگر امور پر تفصیلی تبادلہ خیال بھی کیا گیا۔

سردار عثمان بزدار

مزید : صفحہ اول