حضرت امیر معاویہؓ بہترین حکمران تھے،مولانا حسین احمد

  حضرت امیر معاویہؓ بہترین حکمران تھے،مولانا حسین احمد

  



لاہور(نمائندہ خصوصی)سنی علماء کونسل ضلع لاہور کے زیر اہتمام کاتب قرآن حضرت سیدنا معاویہ ؓ بن ابی سفیانؓ سیمینارمیں مختلف شعبہ ہائے زندگی اور مکاتب فکر کی شخصیات نے شرکت کرکے سید معاویہ ؓ کے کردار پر روشنی ڈالی۔ سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے مولانا حسین احمد نے کہاکہ سید امیر معاویہ ؓ نے کئی سال تک کتابت وحی کے نازکی فرائض انجام دئیے اوراپنے لئے نبی کریمؐ سے بہترین دعائیں لیں۔ سید فاروق اعظمؓ کے دور میں انہی قائدانہ صلاحیتوں کا لوہا منوایا۔ تاریخ اسلام میں سب سے پہلا بحری بیڑہ تیار کیا، اپنی عمرکا بہترین حصہ رومی، عیسائیوں کیخلاف جہاد میں گزارااور ہر بار ان کے دانت کھٹے کیے۔ مولانا حسین احمد نے کہاکہ نبی کریمؐ نے دعا دیتے ہوئے فرمایا کہ اللہ، امیر معاویہؓ کو ہدایت دینے والا اور ہدایت یافتہ بنادیجئے اوراس کے ذریعے سے لوگوں کو ہدایت دیجئے۔ حضرت علی المرتضیٰ نے فرمایا کہ معاویہ ؓ کی گورنری اور امارات کو ناپسند مت کرو وگرنہ تم دیکھو گے کہ سر شانوں سے اس طرح کٹ کٹ کر گریں گے جس طرح پھل درخت سے ٹوٹ کر گرتا ہے۔ سیدنا معاویہ ؓ کا برتاؤ اپنی رعایا کے ساتھ بہترین حکمران جیسا تھا۔ سیمینار سے مولانا محمد اکرم عثمانی، مولانا طاہر فاروقی، احمد سعید صدیقی اور غلام رسول چوہدری نے بھی خطاب کیا۔

مزید : میٹروپولیٹن 1