مہمند،اکاؤنٹس آفس کے ملازمین کا احتجاج جاری

  مہمند،اکاؤنٹس آفس کے ملازمین کا احتجاج جاری

  



مہمند(نمائندہ پاکستان)مہمند، ڈسٹرکٹ اکاؤنٹس آفس غلنئی کے ملازمین کی مطالبات کے حق میں احتجاج بدستور جاری۔تمام سرکاری ملازمین کے رواں ماہ کی تنخواہیں اور پنشن کی ادائیگیاں بندکرنے پر غور شروع کردیا۔مطالبات تسلیم نہ کئے گئے تو قلم چھوڑ ہڑتال کے ذریعے ملازمین کی تنخواہوں کی ادائیگیاں بھی روک دینگے۔تفصیلات کے مطابق ملک کے دیگر حصوں کی طرح قبائلی ضلع مہمند کے ڈسٹرکٹ اکاؤنٹس آفس غلنئی کے سرکاری ملازمین کا احتجاج کئی ہفتوں سے بدستور جاری ہے اور مطالبات تسلیم نہ ہونے تک احتجاج جاری رکھنے کا اعلان کیا گیا۔ اس موقع پر میڈیا کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے ڈسٹرکٹ اکاؤنٹس آفیسر رفیق خان، اسسٹنٹ ڈسٹرکٹ اکاؤنٹس آفیسر فرمان خان، سنیئرآڈیٹرز طارق شاہ، نادرشاہ، منظور خان، اشرف الدین اور دیگر نے کہا کہ اگر حکومت نے اکاؤنٹس اینڈ آڈٹ ایسوسی ایشن کے مطالبات تسلیم نہ کئے گئے تو ہم ضلع مہمند کے تمام سرکاری ملازمین کی رواں ماہ مارچ کی تنخواہیں اورر پنشن کی ادائیگیاں بھی روک دینگے۔ انہوں نے کہاکہ،نیب، ایف آئی اے اور تمام اہم سرکاری اداروں کو ہرقسم معلومات ہم فراہم کرتے ہیں اور ان سے زیادہ سرکاری امور ہم نمٹاتے ہے ان کی تنخواہیں اور مراعات ہم سے کئی گناہ زیادہ ہے جبکہ اس کے مقابلے میں اکاؤنٹس اینڈ آڈٹ ملازمین کی تنخواہیں نہ ہونے کی برابر ہے جوکہ ہمارے ساتھ سراسر ظلم اور ناانصافی ہے۔ انہوں نے کہا کہ اگر حکومت نے ہمارے مطالبات تسلیم نہ کئے گئے تو اپنے حقوق کیلئے کسی بھی قسم کی اقدامات اٹھانے سے گریز نہیں کرینگے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر