بلاول بھٹو کا ماسٹر اسٹروک، عمران خان کو وزیراعظم مان لیا

بلاول بھٹو کا ماسٹر اسٹروک، عمران خان کو وزیراعظم مان لیا

  



کرونا وائرس نے پیپلز پارٹی کے سربراہ بلاول بھٹو اور وزیراعظم عمران خان کے درمیان فاصلے کم کردیے، بلاول بھٹو نے سیاست میں فہم و فراست سے کام لیتے ہوئے چھکا ماردیا، یہ حقیقت ہے کہ کرونا وائرس دنیا بھر میں ہلاکتوں کا سبب بن رہا ہے، اس وائرس کی وجہ سے دنیا کی ترقی کا پہیہ جام ہورہا ہے، پاکستان میں بھی روز بروز کرونا کے مریضوں میں مسلسل اضافہ ہورہا ہے، بلاول بھٹو نے کراچی میں ایک اہم پریس کانفرنس سے خطاب کیا جس میں انہوں نے کرونا وائرس سے متعلق عوام کو معلومات فراہم کیں، اور اس کی روک تھام کیلئے کیے جانے والے صوبائی حکومت کے اقدامات سے آگاہ کیا۔ اس موقع پر انہوں نے پہلی بار تمام اختلافات کو بالائے طاق رکھ کر وزیراعظم عمران خان کو تنقید کا نشانہ نہیں بنایا بلکہ اپنے بھرپور مدد کا یقین دلاتے ہوئے ان کی کارکردگی کی تعریف کی، جسے سیاسی و عوامی حلقوں نے بہت سراہا ہے۔ یہ بلاول بھٹو کی سیاسی تاریخ میں پہلی بار ان کے جملوں کی پذیرائی کی گئی۔ ان حلقوں کا کہنا ہے کہ بلاول نے انتہائی فہم و فراست سے کام لیتے ہوئے نرم رویہ اختیار کرتے ہوئے عمران خان کیلئے نیک تمناؤں کا اظہار کیا ہے۔ بلاول بھٹو کے اس رویے نے ثابت کردیا کہ وہ مستقبل میں ایک بڑے سیاسی رہنما بن کر ابھر سکتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ معیشت کو سنبھالا دینے کیلئے سنجیدہ اقدامات کرنے ہونگے، یہ وقت اپوزیشن کرنے کا نہیں ہے اور نہ ہی تنقید برائے تنقید کا ہے، عملی کام کرنے کا موقع ہے۔ یہ پہلا موقع ہے کہ صوبائی حکومت نے عوام کیلئے براہ راست اہم اقدامات کیے ہیں، او رصوبے میں کرونا وائرس کو پھیلنے سے روکنے کیلئے ٹھوس اور مؤثر اقدامات کیے ہیں، یہی نہیں بلکہ روزانہ اجرت پر کام کرنے والوں کے لئے بھی خصوصی پیکج کا اعلان کیا ہے، انہوں نے وزیراعظم کی کامیابی کیلئے بھی خصوصی دعا کی ہے۔

مزید : صفحہ اول