اٹلی میں کورونا وائرس سے ہلاکتوں میں ہوشربا اضافہ، تعداد چین سے بھی آگے بڑھ گئی

اٹلی میں کورونا وائرس سے ہلاکتوں میں ہوشربا اضافہ، تعداد چین سے بھی آگے بڑھ ...
اٹلی میں کورونا وائرس سے ہلاکتوں میں ہوشربا اضافہ، تعداد چین سے بھی آگے بڑھ گئی

  



روم(مانیٹرنگ ڈیسک) اٹلی میں کورونا وائرس کی وباءچین سے بھی زیادہ شدت اختیار کر گئی۔ میل آن لائن کے مطابق موذی وباءکے باعث اٹلی میں گزشتہ روز 475افراد کی موت واقع ہوئی جس سے ہلاکتوں کی مجموعی تعداد 3ہزار 405تک پہنچ گئی جو کہ چین میں ہونے والی ہلاکتوں سے بھی زیادہ ہے۔ یہ وائرس چین کے شہر ووہان سے پھیلنا شروع ہوا اور اب تک چین میں اس سے 3ہزار 249ہلاکتیں ہوئی ہیں۔ اب چین میں نئے کیسز سامنے آنے اور مریضوں کی موت ہونے کی شرح نہ ہونے کے برابر رہ گئی ہے۔

اٹلی کے پاپاگیووینی ہسپتال کے اندر کی ایک ویڈیو منظرعام پر آئی ہے جس میں کورونا وائرس کے مریضوں کو انتہائی تشویشناک حالت میں دیکھا جا سکتا ہے جنہیں سانس لینے میں شدید دشواری آ رہی ہوتی ہے۔ اس ویڈیو میں اطالوی ڈاکٹر کہہ رہے ہوتے ہیں کہ ان کی انتہائی کوششیں بھی مریضوں کو افاقہ دلانے کے لیے ناکافی ثابت ہو رہی ہیں کیونکہ روزانہ سینکڑوں نئے مریض سامنے آ رہے ہیں۔ اٹلی میں روزانہ ہونے والی اموات کی شرح بھی خوفناک ہو چکی ہیں۔ ہسپتال کے ڈاکٹر لورینزو گریزیولی کا کہنا تھا کہ ”طبی عملہ شدید ڈپریشن کا شکار ہو چکا ہے اور میں خود اس وقت جتنا ذہنی دباﺅ کا شکار ہوں، کبھی زندگی میں اتنا نہیں ہوا۔ لوگوں کی حالت تشویشناک ہے اور وہ ہمارے سامنے بغیر علاج کے مر رہے ہیں۔“

بدھ کے روز 427جبکہ کل جمعرات کے روز 475لوگ ہلاک ہوئے۔ ہسپتالوں کے باہر فوجی ٹرک تعینات کیے جا چکے ہیں جو مرنے والوں کی لاشوں کو جلانے کے لیے لیجا رہے ہیں۔اٹلی کے شہر برگیمو میں صورتحال اس قدر سنگین ہو چکی ہیں کہ حکام کے مطابق مردہ خانے لاشوں سے بھر چکے ہیں اورشہر کی شمشان گھاٹوں کا عملہ روزانہ 24لاشیں جلا رہا ہے۔

مزید : بین الاقوامی