کلکوٹ تھل نہر تنازعہ، مذاکرات کا میاب،مظاہرین نے دھرنا ختم کر دیا

  کلکوٹ تھل نہر تنازعہ، مذاکرات کا میاب،مظاہرین نے دھرنا ختم کر دیا

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


دیر بالا(نمائندہ پاکستان)کلکوٹ تھل نہر تنازعہ، مذاکرات کا میاب،مظاہرین نے دھرنا ختم کر دیا۔تفصیلات کی مطابق گذشتہ تین دنوں سے کلکوٹ کے عوام اسسٹنٹ کمشنر شرینگل کی دفتر کے سامنے دھرنا دئے بیٹھے تھے۔ دھرنے پر بیٹھے ہوئے لوگوں کا کہنا تھا کہ جب تک تھل والے طرف سے ایریگیشن چینل پر کام شروع نہ ہو تب تک ہم اپنا دھرنا جاری رکھیں گے۔ جس کے بعد ڈپٹی کمشنر دیر بالا اکمل خان نے تھل اور کلکوٹ کے مشران کے ساتھ اپنے دفتر میں کامیاب مذاکرات کی۔ اور ایریگیشن چینل پر کام شروع کرنے کی ہدایت کی۔ کل مورخہ 17.03.2022 کو ڈپٹی کمشنر دیر بالا اکمل خان کی ہدایت پر۔ اسسٹنٹ کمشنر دیر سکندر خان، اسسٹنٹ کمشنر شرینگل محمد یار اور ڈی ایس پی شرینگل غلام صادق نے تھل کا دورہ کیا اور تھل سائیڈ سے ایریگیشن چینل پر دوبارہ کام شروع کیا۔  جبکہ انتظامیہ کا ساتھ دینے پر تھل قوم کا شکریہ بھی ادا کیا  اور ایریگیشن چینل پر کام کرنے کے دوران تھل قوم سے پر امن رہنے کی اپیل کی۔ بعد میں اسسٹنٹ کمشنر شرینگل محمد یار، اسسٹنٹ کمشنر دیر سکندر خان اور ڈی ایس پی شرینگل غلام صادق نے  تھل سے واپسی پر شرینگل میں دھرنے پر بیٹھے ہوئے شرکاء سے ملاقات کی اور ان سے دھرنا ختم کرنے کا مطالبہ کیا۔ آخر میں کلکوٹ قوم کی طرف سے مولانا گل نور شاہ نے ضلع انتظامیہ دیر بالا، تحصیل انتظامیہ اور پولیس کا شکریہ ادا کیا اور اپنی قوم کو پر امن رہنے کی ہدایت کی۔ اور دھرنا بخیریت ختم کرکے لوگ اپنے اپنے گھروں کو روانہ ہوئے۔