افغانستان کی علاقائی خود مختاری، ترقی کے احترام سمیت 13نکات پر اتفاق

  افغانستان کی علاقائی خود مختاری، ترقی کے احترام سمیت 13نکات پر اتفاق

  

اسلام آباد (این این آئی) روس، چین، پاکستان اور ایران نے کہا ہے کہ افغانستان کی علاقائی خود مختاری اور ترقی کا احترام کیا جائیگا۔ منگل کو ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق 18 مئی کو افغانستان پر روس چین پاکستان اور ایران کے خصوصی نمائندوں کا ورچوئل اجلاس منعقد ہوا۔ ترجما ن دفتر خارجہ کے مطابق اجلاس میں افغانستان کی موجود صورتحال اور مفاہمتی عمل کا جائزہ لیا گیا۔ ترجمان کے مطابق مشترکہ اعلامیہ میں 13 نکات سامنے آئے، افغانستان کی علاقائی خود مختاری اور ترقی کے احترام کا عزم،افغان سیاسی قیادت کے درمیان معاہد ہ کا خیر مقدم کیا گیا۔افغان مسئلہ کے حل اور مفاہمتی عمل میں پیش رفت کیلئے افغانوں پر مبنی عمل کی حمایت کی گئی، افغان طالبان اور سیاسی قیادت سمیت تمام دھڑوں کو ملکر انٹرا افغان مذاکرات جلد شروع کرنے پر زور دیا گیا۔ ترجمان کے مطابق افغانستان کو جلد پائیدار امن کے حصول میں تعاون فراہم کرنے کے عزم کا اظہار کیا گیا۔ افغانستان سے غیر ملکی افواج کے ذمہ دارانہ انخلاء اور بعد کی صورتحال پر گہری نظر رکھنے پر اتفا ق کیا گیا۔ ترجمان کے مطابق تمام دھڑوں کی طرف سے قیدیوں کی رہائی کے عمل کی حمایت کی گئی،اور اس امید کا اظہار کیا گیا کہ اقوام متحدہ کی قرارداد 2513(2020) پر عملدرآمد کرایا جائے گا۔ ترجمان نے بتایاافغانستان میں ہر قسم کے سیز فائر کیلئے سیکرٹری جنرل اقوام متحدہ کی تجویز کا خیر مقد م کیا گیا۔ افغانستان میں القاعدہ،داعش،ایل ای ٹی، ایم ٹی ٹی پی اور دیگر دہشتگرد گروہوں کے حوالے سے شدید تحفظات کا اظہار کیا گیا۔ ترجمان نے بتایا افغانستان ان دہشت گرد تنظیموں اور منشیات سمگلنگ نیٹ ورک کیخلاف فیصلہ کن کارروائی کرے۔ ترجمان کے مطابق کویڈ 19 سے نمٹنے کیلئے افغانستان کی ہر ممکن مدد کرنے کا عزم دہرایا گیا۔ عالمی برادری سے مطالبہ کیا گیا کہ افغان مہاجرین کی بحفاظت واپسی یقینی بنائی جائے۔ ترجمان کے مطابق اتفاق کیا گیا کہ افغانستان کے حوالے سے جائزہ کیلئے رابطہ قائم رکھا جائے۔

13نکات اتفاق

مزید :

صفحہ آخر -