مونال ریسٹورنٹ کا وہ حصہ جسے سپریم کورٹ نے مسمار کرنے کاحکم جاری کر دیا

مونال ریسٹورنٹ کا وہ حصہ جسے سپریم کورٹ نے مسمار کرنے کاحکم جاری کر دیا
مونال ریسٹورنٹ کا وہ حصہ جسے سپریم کورٹ نے مسمار کرنے کاحکم جاری کر دیا

  

اسلام آباد(ویب ڈیسک) عدالت عظمیٰ نے مارگلہ ہلز کے تحفظ سے متعلق کیس کی سماعت یکم جون تک ملتوی کرتے ہوئے مونال ریسٹورنٹ کا توسیع شدہ حصہ مسمار کرنے کا حکم جاری کردیا ہے ، چیف جسٹس گلزاراحمد کی سربراہی میں قائم دورکنی بنچ نے منگل کے روز کیس کی سماعت کی تو چیف جسٹس نے استفسار کیا کہ کیا آئی سی ٹی انتظامیہ نے مارگلہ ہلز پر کرشنگ رکوا دی گئی ہے ؟

جس پر چیف کمشنر اسلام آباد نے بتایا کہ مارگلہ ہلز پر کوئی کرشنگ نہیں ہورہی ہے ، چیف جسٹس نے کہا کہ مارگلہ کی پہاڑیوں کو نیشنل پارک قرار دیا گیا ہے ،کیا اسکو لیز پر دیا جاسکتا ہے؟ وہاں پرمونال ریسٹورنٹ سمیت دیگر ریسٹورنٹس اور ریزیڈنشیا کیسے چل رہے ہیں؟جس پر چیف کمشنر نے کہا کہ خلاف ورزی پر مونال ریسٹورنٹ کو سیل کر دیا گیاہے۔

مزید :

علاقائی -اسلام آباد -