روزانہ اپنے سے سوال کریں: جو مجھ سے توقع کرتے ہیں میں انہیں توقع سے زیادہ کیسے دے سکتا ہوں؟

روزانہ اپنے سے سوال کریں: جو مجھ سے توقع کرتے ہیں میں انہیں توقع سے زیادہ کیسے ...
روزانہ اپنے سے سوال کریں: جو مجھ سے توقع کرتے ہیں میں انہیں توقع سے زیادہ کیسے دے سکتا ہوں؟

  

مصنف:ڈاکٹر ڈیوڈ جوزف شیوارڈز

قسط:73

ان فلم بنانے والے پرڈیوسروں کو دیکھیں جو پہلے بے شمار پیسہ خرچ کرتے ہیں اور بے شمار دولت کماتے ہیں۔ پہلے اعلیٰ قسم کے ہدایتکار، مصنف اور اداروں کو رقم دیتے ہیں اور دوسرے بہت سے اخراجات کرتے ہیں۔ اس طرح ایک اچھی فلم بن جاتی ہے تو وہ بے شما ردولت بھی کماتے ہیں اور ان کی فلم کو بھی سراہا جاتا ہے۔

”پہلے خدمت کو شعار بنایئے تو پیسہ خودبخود آئے گا۔“

جو ویٹرس بہترین خدمت بجا لاتی ہے تو اسے ٹپ بھی بہترین ملتی ہے۔ جب کوئی سیکرٹری بہترین ٹائپ کرتی ہے اور باس کے کام میں سہولت پیدا کرتی ہے تو باس اس کی تنخواہ میں ضرور اضافہ کرتا ہے۔

یہاں ہم ایک طاقتور اصول کو بیان کر رہے ہیں جو آپ میں جذبہ خدمت کا رویہ پید اکرنے میں مددگار ہو گا۔

”جس قدر لوگ آپ سے توقع کرتے ہیں اس سے زیادہ انہیں دیا جائے۔“

آپ جو کچھ غیرمعمولی طور پر دوسروں کیلئے کرتے ہیں دراصل یہی آپ بیج رہے ہیں، جب آپ اپنے ادارے کیلئے رضاکارانہ کام کرتے ہیں تو یہ دراصل آپ بیج بو رہے ہیں، جس کی فصل بہت اچھی ہو گی۔

گاہک کو اعلیٰ سروس دینا بھی بیج بونا ہے کیونکہ وہ باربار آپ کے پاس آئے گا۔

خدمت کا پودا لگایئے او رپیسے کی فصل کاٹیے۔

روزانہ اپنے سے سوال کیجیے: جو مجھ سے توقع کرتے ہیں میں انہیں توقع سے زیادہ کیسے دے سکتا ہوں؟ تب اس کے جواب پر عمل کیجیے۔ ایسا رویہ اپنایئے جو آپ کو کامیابی کی منزل تک لے جائے۔

-1 اپنے میں پیدا کیجیے ”میں باعمل رویہ رکھتا ہوں“ اس کے نتیجے میں آپ کے اندر ولولہ پیدا ہو گا۔ اپنے آپ کو باعمل کرنے کیلئے 3 چیزیں اپنائیں:

-A گہرائی تک سوچیں۔ جب آپ کسی چیز میں دلچسپی نہ رکھتے ہوں تو اس سے متعلق معلومات حاصل اور گہرا سوچیں، اس سے جوش بیدار ہو گا۔

-B یہ چیز آپ کی زندگی کو خوشگوار بناتی ہیں: آپ کی مسکراہٹ، آپ کا ہاتھ ملانا ، آپ کی گفتگو، آپ کی چال ڈھال۔

-Cاچھی خبر دیں، بری خبریں کبھی مثبت نتائج پیدا نہیں کرتیں۔

-2اپنے آپ میں یہ جذبہ پیدا کیجیے۔ ”میں بہت اہم ہوں۔“ اگر آپ دوسروں کو اہم خیال کریں گے تو وہ بھی آپ کو اہمیت دیں گے۔

-Aہر موقع پر دوسروں کی تعریف کریں جس سے وہ اپنے آپ کو اہم خیال کریں۔ 

-Bلوگوں کوان کے نام سے پکاریں۔

-3اپنے میں پیدا کیجیے ”خدمت کا جذبہ“ تو پیسہ خود بخود آئے گا۔ اس اصول کو اپنائیں کہ جو لوگ توقع کرتے ہیں ان کی توقع سے زیادہ انہیں دیا جائے۔( جاری ہے ) 

نوٹ : یہ کتاب ” بُک ہوم “ نے شائع کی ہے ( جُملہ حقوق محفوظ ہیں )۔

مزید :

ادب وثقافت -