رینٹل پاور کرپشن کیس ‘ پرویز اشرف کو نیب ریفرنس کی کاپی فراہم کر دی گئی

رینٹل پاور کرپشن کیس ‘ پرویز اشرف کو نیب ریفرنس کی کاپی فراہم کر دی گئی

 اسلام آباد (آئی این پی ) اسلام آباد کی احتساب عدالت کے جج محمد بشیر نے سابق وزیراعظم راجہ پرویز اشرف کیخلاف نیب کی طرف سے دائر کردہ رینٹل پاور کرپشن کیس کی منگل کو سماعت کی‘ عدالت کے حکم پر نیب کی طرف سے نامزد کردہ ملزم سابق وزیراعظم راجہ پرویز اشرف کو ریفرنس کی کاپی فراہم کردی گئی جس کے بعد عدالت نے مزید سماعت 2دسمبر تک ملتوی کردی۔سابق وزیر اعظم راجہ پرویز اشرف خود احتساب عدالت میں پیش ہو ئے۔ راجہ پرویزاشرف نے عدالت سے استدعا کی کہ انہیں نیب کی جانب سے ان کے خلاف دائرریفرنس کی کاپی فراہم کی جائے۔

 مختصر سماعت کے دوران عدالت کے حکم پر راجہ پرویز اشرف کو ریفرنس کی کاپی فراہم کردی گئی جس کے بعد کیس کی مذید سماعت دودسمبر تک ملتوی کردی گئی ۔ نیب نے سابق وزیراعظم کیخلاف بطور وفاقی وزیر پانی و بجلی رینٹل پاور منصوبوں میں کرپشن کا ریفرنس دائر کیا تھا۔ راجہ پرویز اشرف کو ملزم نامزد کرنے کے بعد رینٹل پاور کیس کے ملزموں کی تعداد دس ہوگئی ہے دیگر ملزموں میں واپڈا اور دیگر اداروں کے افسران شامل ہیں۔جبکہ سابق وزیراعظم راجہ پرویز اشرف نے عدالت میں پیشی کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ موجودہ حکومت کی کارکردگی کے بہترین جج عوام ہیں ۔پیپلزپارٹی اپوزیشن کاکردار ادا کررہی ہے ۔انہوں نے کہا کہ عدالتوں میں پیش ہوناہمارے لئے نئی بات نہیں ۔انہوں نے کہا کہ عدالتوں میں پیش ہو کر الزامات کا سامنا کروں گا ۔انہوں نے کہا کہ سابق وزیر اعظم سید یوسف رضا گیلانی اس لئے عدالت میں پیش نہیں ہورہے کیونکہ ان کے خلاف بطور وزیراعظم کیسز تھے اس لئے ان کو استشنی حاصل ہے ۔انہوں نے کہا کہ میں اسلئے عدالت میں پیش ہواہوں مجھ پر بطور وزیر یہ ریفرنس دائر کیا گیا ہے انہوں نے کہا کہ وہ عدالت میں پیش ہوکر اپنی بیگناہی ثابت کرینگے ۔نیب کردار کے حوالے سے ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ معاملہ عدالت میں ہے اس لئے اس پر بات نہیں کرتا چاہتا ۔

 رینٹل پاور کرپشن کیس

مزید : علاقائی