حکیم اللہ کی ہلاکت کا بدلہ، صوابی میں پولیس چیک پوسٹ پر حملہ کرنیوالے چار حملہ آور ہلاک، وزیرستان میں سیکیورٹی فورسز کی چیک پوسٹ پر خود کش حملہ،چار اہلکار شہید

حکیم اللہ کی ہلاکت کا بدلہ، صوابی میں پولیس چیک پوسٹ پر حملہ کرنیوالے چار ...
حکیم اللہ کی ہلاکت کا بدلہ، صوابی میں پولیس چیک پوسٹ پر حملہ کرنیوالے چار حملہ آور ہلاک، وزیرستان میں سیکیورٹی فورسز کی چیک پوسٹ پر خود کش حملہ،چار اہلکار شہید

شمالی وزیرستان،صوابی (مانیٹرنگ ڈیسک) تحصیل شوامیں سیکیورٹی فورسز کی چیک پوسٹ پر خود کش حملے میں چار اہلکار شہید اور چھ زخمی ہوگئے ہیں جبکہ صوابی میں پولیس کی چیک پوسٹ پر حملہ کرنیوالے چار حملہ آور مارے گئے۔ مقامی میڈیا کے مطابق تحصیل شوامیں خود کش آور نے بارود سے بھری گاڑی ایف سی کی چیک پوسٹ سے ٹکرادی جس کے نتیجے میں چار اہلکار شہید ہوگئے ۔زخمیوں کو سی ایم ایچ ٹل منتقل کردیاگیا۔ حملے کے بعد میرعلی ٹل روڈ آمدورفت کے لیے بند کردی گئی اور شرپسندوں سے فائرنگ کے تبادلے کے بعد تین حملہ آور مارے گئے جبکہ گھیرے میں آجانے کی وجہ سے ایک نے خود کو اُڑالیا۔دھماکے کی اطلاع ملتے ہی سیکیورٹی فورسز کی بھاری نفری علاقے میں پہنچ گئی اور امدادی کارروائیاں شروع کردیں ۔ ذرائع کے مطابق حملے میں چیک پوسٹ کو شدید نقصان پہنچاہے ۔دوسری طرف کالعدم تنظیم انصارالمجاہدین کے ترجمان ابوبصیر نے میڈیا کو ٹیلی فون پر بتایاکہ طالبان امیرکی ہلاکت کیخلاف یہ حملہ اُن کی تنظیم نے کیاہے اور حکیم اللہ محسود کی ڈرون حملے میں ہلاکت کا بدلہ لینے کے لیے وہ مزید بھی حملے کریں گے ۔اُدھرصوابی میں شدت پسندوں نے ناٹیاں چیک پوسٹ پر حملہ کردیا، پولیس کی جوابی کارروائی میں چار حملہ آور ہلاک ہوگئے۔ڈی پی او کے مطابق بارہ کے قریب شدت پسندوں نے پولیس چوکی پر حملہ کر دیا ،دونوں طرف سے بھاری ہتھیاروں کا استعمال کیا گیا۔پولیس نے بھرپور جوابی کارروائی کرتے ہوئے چار شدت پسند ہلاک کر دیئے جبکہ دیگر ساتھیوں کی تلاش شروع کردی گئی۔

مزید : وزیرستان /اہم خبریں

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...