’’ اگر آپ اپنی آمدنی فوری بڑھانا چاہتے ہیں تو اپنے جسم میں یہ ایک چیز تبدیل کر لیں ‘‘ سائنسدانوں نے مردوں کو انتہائی حیران کن مشورہ دے دیا

’’ اگر آپ اپنی آمدنی فوری بڑھانا چاہتے ہیں تو اپنے جسم میں یہ ایک چیز تبدیل ...
’’ اگر آپ اپنی آمدنی فوری بڑھانا چاہتے ہیں تو اپنے جسم میں یہ ایک چیز تبدیل کر لیں ‘‘ سائنسدانوں نے مردوں کو انتہائی حیران کن مشورہ دے دیا

  

برلن(نیوز ڈیسک) اگر آپ اپنی تنخواہ میں اضافے کے خواہش مند ہیں تو فوری طور پر باڈی بلڈنگ جیسی سرگرمیوں پر توجہ دیں کیونکہ سائنسدانوں نے ایک تازہ ترین تحقیق میں انکشاف کیا ہے کہ ہٹے کٹے اور تنو مند جسم والے افراد کی آمدنی دبلے پتلے اور کمزور افراد کی نسبت زیادہ ہوتی ہے، کیونکہ ہر کوئی انہیں زیادہ تنخواہ کا حقدار سمجھتا ہے۔

سکاٹ لینڈ کی سٹارتھ کلائڈ یونیورسٹی اور جرمنی کی پوٹسڈیم یورنیورسٹی کے سائنسدانوں نے اس تحقیق کے دوران تقریباً 15 ہزار مردوں کے وزن اور آمدنی کے درمیان تعلق کا مطالعہ کیا۔ تحقیق سے معلوم ہوا کہ باڈی ماس انڈیکس (قد کے حساب سے مناسب وزن کی پیمائش کا ایک معیار) کے مطابق کم وزن کے حامل قرار پانے والے مردوں کی اوسط آمدنی بھاری بھرکم مردوں کی نسبت اوسطاً 8 فیصد کم تھی ۔یہ فرق ان شعبوں میں زیادہ تھا جہاں کام کے لئے ملازمین کی جسمانی صحت اور طاقت پر انحصار کیا جاتا ہے، لیکن عمومی طور پر تمام شعبوں میں اس طرز فکر کے اثرات نظر آئے۔

’’ میں مردوں کے جسم سے یہ چیز نکال کر بے حد شوق سے پیتی ہوں اور پچھلے 20 سال سے روز۔۔۔‘‘ خاتون نے ایسا انکشاف کر دیا کہ کوئی مرد پاس سے گزرنے کی بھی ہمت نہ کرے

تحقیق کاروں کا کہنا ہے کہ غالباً یہ سوچ ہماری نفسیات کا حصہ ہے کہ ہم زیادہ وزن کو طاقت اور اختیار کی علامت سمجھتے ہیں اور کم وزن کو کمزروی اور محرومی کی علامت سمجھا جاتا ہے۔ انہی تصورات کے پیش نظر زیادہ وزن والے لوگوں کو بہتر سلوک کا مستحق سمجھا جاتا ہے اور انہیں زیادہ سہولیات اور بہتر تنخواہ دی جاتی ہے۔ اس کے برعکس کم وزن والوں کے لئے کم سہولیات اور تھوڑی تنخواہ کو ہی کافی سمجھا جاتا ہے۔ یہی وجہ ہے کہ وزن کی زیادتی صحت کیلئے نقصان دہ ہونے کے باوجود آمدنی کیلئے مفید ثابت ہوتی ہے۔ اسی طرح جو افراد نارمل صحت کے حامل ہیں لیکن ان کا وزن قدرے کم ہے انہیں بھی نسبتاً کم تنخواہ دی جاتی ہے۔

سعودی عرب میں خوفناک واقعہ، شیر کا نو عمر لڑکی پر حملہ اور پھر۔۔۔ ایسی ویڈیو سامنے آگئی کہ دیکھ کر انسان کانپ اُٹھے

تحقیق کے دوران 15 ہزار خواتین کے وزن اور آمدنی کے درمیان تعلق کا بھی جائزہ بھی لیا گیا اور دلچسپ انکشاف ہوا کہ یہاں معاملہ بالکل الٹ تھا۔ خواتین میں سب سے زیادہ آمدنی ان کی تھی جو سب سے زیادہ دبلی پتلی تھیں، جبکہ نسبتاً موٹی خواتین کی آمدنی کم تھی۔ تحقیق کار جانی گیفرڈ کا کہنا تھا کہ ان نتائج سے ظاہر ہوتا ہے کہ جہاں تک آمدنی کا تعلق ہے تو نارمل سے زیادہ وزن مردوں کیلئے مفید جبکہ خواتین کیلئے نقصان دہ ثابت ہوتا ہے ۔

مزید : ڈیلی بائیٹس