نرسری گروپ کرسمس ڈے پر’گلٹر‘ کے استعمال پرپابندی عائد کر دی گئی

نرسری گروپ کرسمس ڈے پر’گلٹر‘ کے استعمال پرپابندی عائد کر دی گئی

لندن (این این آئی) نرسری گروپ نے اپنی تمام نرسریز میں کرسمس ڈے پر ’’چمک‘‘ (گلٹر) کے استعمال پر پابندی لگا دی ہے کیونکہ اس سے ماحولیات کو نقصان پہنچتا ہے۔بچے کرسمس کے موقع پر کرسمس کارڈز اور باؤبلز بنانے کیلئے’’گلٹر‘‘ (چمک) کا استعمال کرتے ہیں جوکے مائیکرو پلاسٹک ہوتی ہے۔نرسری چین ٹاپس ڈے نرسریز جس کی ساؤتھ آف انگلینڈ میں19نرسریز ہیں نے اپنے تمام اداروں میں کرسمس ڈے پر اس کے استعمال پر پابندی عائد کر دی ہے۔مینجنگ ڈائریکٹر شیرل ہیڈلینڈ نے کہا کہ جب انہیں احساس ہوا کہ یہ ’’گلٹر‘‘ مائیکرو پلاسٹک ہوتا ہے اور ماحولیات کے لئے نقصان دہ ہے اس کا احساس ہونے کے بعد میں نے اس پر پابندی لگانے کا فیصلہ کیا۔انہوں نے کہا کہ بچے کرسمس کرافٹس میں اس کا استعمال کرتے ہیں گھروں میں جب کارڈ بورڈ کو پھاڑا جاتا ہے تو اس میں چمک دار ذرات ماحول میں بکھر جاتے ہیں جوکہ رنگ برنگے ہوتے ہیں۔ یہ فضا میں گھروں میں سڑکوں پر پھاڑے جاتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ ہمارے پاس3000 بچے ہیں اور یہ تمام فی الوقت کرسمس کرافٹس بنا رہے ہیں اور ہر طرف گلٹر نظر آرہی ہے۔ملک بھر میں 22000نرسریز ہیں اور یہ تمام کئی کئی کلو گلٹر کرسمس کرافٹس میں استعمال کر رہی ہیں تو اندازہ لگایا جا سکتا ہے کہ ماحولیات پر اس کے کیا اثرات ہوں گے ٗ ہم ماحولیات کو اس طریقے سے خوفناک نقصان پہنچا رہے ہیں۔شیرل ہیڈلینڈ نے کہا کہ میں27برسوں سے نرسریز چلا رہی ہیں اور مجھے یہ آئیڈیا نہیں تھا کہ ہم ماحول کو نقصان پہنچا رہے ہیں ٗآپ اس کو ری سائیکل نہیں کرسکتے کیونکہ یہ بہت چھوٹے چھوٹے ذرات ہوتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ اب ہم نے احساس ہونے کے بعد اس کا استعمال بند کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ والدین بھی شاید اس حوالے سے آگاہ نہیں تھے امید ہے کہ وہ بھی اس فیصلے کو سپورٹ کریں گے۔انہوں نے کہا کہ ہم نے چند ماہ قبل سروے کیا تھا جس میں86فیصد والدین کا کہنا تھا کہ ہمیں پائیدار ماحول چاہئے اور بہت سے والدین ہم سے ایسے اقدامات کی توقع رکھتے تھے اور اپنے بچوں کیلئے بھی پائیدار ایجوکیشن چاہتے ہیں۔ میرین کنزرویشن سوسائٹی کی سوکنسی نے ٹاپس ڈے نرسریز کے اس اقدام کو سراہا۔

مزید : عالمی منظر