ایجنسیوں کی انفارمشن شیئرنگ کے سسٹم کو مضبوط بنانا ہو گا

ایجنسیوں کی انفارمشن شیئرنگ کے سسٹم کو مضبوط بنانا ہو گا
 ایجنسیوں کی انفارمشن شیئرنگ کے سسٹم کو مضبوط بنانا ہو گا

  


لاہور (جنرل رپورٹر) سابق وزیر خارجہ خورشید محمود قصوری نے کہا کہ دہشت گردی مستقل ناسور ہے اس کے خلاف ایجنسیوں کی انفارمشن شیئرنگ کے سسٹم کو مضبوط بنانا ہو گا اب لگتا یہ ہے کے زیادہ تر دہشت گرد افغانستان میں موجود ہیں اور وہاں سے ہی گاہے بگاہے پاکستانی چوکیوں پر حملے کرتے ہیں وہ ایشو آف دی ڈے میں گفتگو کر رہے تھے انہوں نے کہا کہ اس پر حکومت پاکستان کو امریکہ سے مؤثر انداز میں بات کرنے کی ضرورت ہے چونکہ افوج پاکستان نے دہشت گردی کے خلاف جنگ لڑی ہے اور دہشت گردوں کی کمر توڑ دی ہے ور اب بعض گروپ افغانستان میں پناہ لے چکے ہیں اور لگتا یہی ہے وہاں ان گروپوں کو بعض ہمسائیہ ممالک کی پشت پناہی حاصل ہے ۔

خورشیدقصوری

مزید : صفحہ اول