مغربی ثقافت و تعلیم کو فرو غ دینے کیلئے لادینی قوتیں بر سرپیکا ر ہیں : مولانا گل نصیب

مغربی ثقافت و تعلیم کو فرو غ دینے کیلئے لادینی قوتیں بر سرپیکا ر ہیں : مولانا ...

جندول نمائندہ(نمائندہ پاکستان) صوبائی امیر جمعیت علماء اسلام مولانا گل نصیب خان نے کہا ہے کہ عالمی ایجنڈہ پر ملک میں فحاشی و عریانی اور مغربی ثقافت و تعلیم کو فروغ دینے کیلئے لادینی قوتیں بر سر پیکار ہیں ، تحصیل منڈا سٹیڈئم میں سید ارشاد سادات کی سربراہی میں عظم انقلاب کانفرس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ عدلیہ انتظامیہ پارلیمنٹ اور حکومت سے حصول انصاف میں مایوس لوگ داعش اور طالبان کے ساتھ شامل ہو تے ہیں ، انہوں نے کہا کہ روس اور امریکہ کو خوش کرنے کیلئے مسلمانوں نے کسی اور کا جنگ خود پر مسلط کیا اور آج اسی سازش کے تحت مسلمان مسلمان کا قتل کر رہا ہے اور مسلمان ملک دوسرے مسلمان ملک کے خلاف آلہ کار بن چکا ہے انہوں نے کہا کہ مدرسہ ،پگڑی ، برقعہ ، مدارس اور اسلامی تعلیمات کو دہشت گردی کا نام دیا جاتا ہے جو کہ مسلمانوں کیلئے لمحہ فکریہ ہے ، تقریب سے خطاب کرتے ہوئے سینیٹر حافظ حمد اللہ نے کہا کہ مسلمانوں کو فتح کرنے کیلئے انگریزوں اور ہندووں نے سازش کے تحت تعلیمی نصاب میں تبدیلی اور نوجوانوں کو فحاشی و عریانی کی جانب متوجہ کرانے کیلئے میڈیاں کو استعمال کیاانہوں نے کہا کہ 9/11کے بعد انگریز کی خوشنودی کیلئے مسلمان دوسرے مسلمان کیساتھ لڑ رہا ہے جس کی وجہ سے ہمیں دہشت گردوں کے نام سے نوازا جا رہا ہے انہوں نے کہا کہ تحریک انصاف نے ملک بھر میں سیاست کے رنگ میں فحاشی اور عریانی کو فروغ دینے میں کوئی کثر نہیں چھوڑی اور اب بات اس حد تک پہنچ گئی ہے کہ صوبہ میں مخلوط نظام تعلیم رائج کرنے کی باتیں ہو رہی ہے انہوں نے کہا کہ جمعیت علماء اسلام کبھی بھی ایسا ہونے نہیں دیگی، انہوں نے کہا کہ جمعیت علماء اسلام کا مقصد پارلیمنٹ میں بیٹھ کر کرسی اور مراعات کے مزے لینا نہیں بلکہ پارلیمنٹ فیصلوں کو اسلامی روایات کے مطابق ڈھالنے میں کردار ادا کرنا ہے ۔تقریب سے امیر جمعیت علماء اسلام باجوڑ ایجنسی و سابق سینیٹر مولانا عبد الرشید،جمعیت طلبہ اسلام کے صوبائی امیر قاری عدنان ،ضلعی امیر بونیر مولانا سعید الرحمن،مولانا فضل عظیم ،قاری احسان اللہ و دیگر مشران نے خطاب کیا ۔مشران نے کہا کہ جمعیت علماء اسلام کے رفقاء کارکنان اور امراء قائد جمعیت کا پیغام گھر گھر تک پہنچائے انہوں نے کہا کہ ہمارا مقصد پاکستان میں شرعی نظام کا قیام ہے جس کیلئے کسی بھی قربانی سے دریغ نہیں کرینگے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر