مفتی منیب الرحمان کی دھرنا گروپ سے مذاکرات کیلئے حکومتی وفد کا حصہ بننے سے معذرت

مفتی منیب الرحمان کی دھرنا گروپ سے مذاکرات کیلئے حکومتی وفد کا حصہ بننے سے ...
مفتی منیب الرحمان کی دھرنا گروپ سے مذاکرات کیلئے حکومتی وفد کا حصہ بننے سے معذرت

  



اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) چیئرمین رویت ہلال کمیٹی مفتی منیب الرحمان نے دھرنا گروپ سے مذاکرات کیلئے حکومتی وفد کا حصہ بننے سے معذرت کرتے ہوئے دھرنے کی واضح حمایت کا اعلان کردیا۔

نجی ٹی وی 92 نیوز کے مطابق حکومت کی جانب سے چیئرمین رویت ہلال کمیٹی مفتی منیب الرحمان سے تحریک لبیک کی جانب سے فیض آباد میں دیا گیا دھرنا ختم کرانے میں کردار ادا کرنے کی درخواست کی گئی تھی جبکہ مفتی منیب کو حکومت کی مذاکراتی ٹیم کا حصہ بننے کی پیشکش بھی کی گئی تھی ۔ حکومت کی جانب سے آنے والی پیشکش مفتی منیب الرحمان نے مسترد کردی اور مذاکراتی وفد کا حصہ بننے سے بھی معذرت کرلی ۔ مفتی منیب الرحمان نے کہا ہے کہ دھرنے کی حمایت کر رکھی ہے اس لیے مذاکرات میں حکومت کی نمائندگی نہیں کرسکتا، ناموس رسالت ﷺ قانون پر میرا موقف واضح ہے اور اس حوالے سے پہلے ہی اعلان بھی کرچکا ہوں۔

یہ خبر بھی پڑھیں: مفتی منیب کا حکومت اوردھرنا قیادت سے درمیانی راستہ اختیار کرنے کا مطالبہ ، بامقصد مذاکرات کیے جائیں: چیئرمین رویت ہلال کمیٹی

واضح رہے کہ دو روز قبل مفتی منیب الرحمان نے ایک پریس کانفرنس میں حکومت کو دھرنا دینے والوں کے خلاف طاقت کے استعمال سے گریز کا مطالبہ اور دھرنے کی حمایت کا اعلان کیا تھا۔

مزید : قومی /اہم خبریں