’جب میں فوج میں تھا تو ہمیں تربیت دی جاتی تھی کہ نہاتے وقت پانی کو۔۔۔‘ ریٹائرڈ برطانوی کمانڈو نے سارا دن توانا رہنے کا آسان ترین نسخہ دنیا کو بتادیا

’جب میں فوج میں تھا تو ہمیں تربیت دی جاتی تھی کہ نہاتے وقت پانی کو۔۔۔‘ ...
’جب میں فوج میں تھا تو ہمیں تربیت دی جاتی تھی کہ نہاتے وقت پانی کو۔۔۔‘ ریٹائرڈ برطانوی کمانڈو نے سارا دن توانا رہنے کا آسان ترین نسخہ دنیا کو بتادیا

  


لندن(نیوز ڈیسک)ہم میں سے اکثر موسم سرما میں ٹھنڈے پانی سے نہانے کا تصور کر کے ہی کانپ اٹھتے ہیں، لیکن ایک سابق برطانوی کمانڈو نے اس کا ایسا شاندار فائدہ بتا دیا ہے کہ آپ یخ ٹھنڈے موسم میں بھی نہانے کے لئے ٹھنڈے پانی کو ہی ترجیح دیں گے۔

دی انڈیپنڈنٹ کے مطابق سابق نیوی سیل کلنٹ ایمرسن، جو کہ مشہور کتاب ’ہنڈرڈ ڈیڈلی سکلز‘ کے مصنف بھی ہیں، نے ٹھنڈے پانی سے نہانے کے حیرتناک فائدے کے متعلق بات کرتے ہوئے کہا ”جب ہمیں کمانڈو ٹریننگ دی جاتی تھی تو ہم سرد ترین موسم میں بھی ٹھنڈے پانی سے نہایاکرتے تھے۔ پہلے تو یہ تکلیف دہ تشدد محسوس ہوتا تھا لیکن پھر پتا چلا کہ یہ تو ایک شاندار تھیراپی ہے جو آپ کو سارا دن چست و توانا رکھتی ہے۔

دنیا کا انوکھا ترین قبیلہ جہاں کسی قریبی عزیز کی موت ہوجائے تو خواتین کو اپنے جسم کا یہ حصہ کاٹنا پڑجاتا ہے

جب ٹھنڈا پانی آپ کے جسم پر پڑتا ہے تو اس میں vasoconstriction کا عمل ہوتا ہے جس کے نتیجے میں عضلات اور پٹھوں میںموجود فاسد مادے خارج ہو جاتے ہیں۔ آپ کو فوری طور پر توانائی کا جھٹکا لگتا ہے جس کا اثر سارا دن آپ کے جسم میں موجود رہتا ہے۔

ٹھنڈے پانی سے نہانے سے آپ کے جوڑ صحتمند رہتے ہیں اور سوزش سے بھی حفاظت ملتی ہے۔آپ صرف چست و توانا ہی نہیں رہتے بلکہ جسم کا چوٹوں سے متاثر ہونے کا امکان بھی کم ہو جاتا ہے، اور کوئی چوٹ لگتی ہے تو جسم اس کا بہتر طور پر مقابلہ کر سکتا ہے جبکہ چوٹ ٹھیک بھی جلدی ہو جاتی ہے۔“

مزید : برطانیہ