نیب نے انکوائریاں،احتساب عدالتوں کے پراسیکیوٹرز کی خدمات حاصل کرلی گئیں

نیب نے انکوائریاں،احتساب عدالتوں کے پراسیکیوٹرز کی خدمات حاصل کرلی گئیں
نیب نے انکوائریاں،احتساب عدالتوں کے پراسیکیوٹرز کی خدمات حاصل کرلی گئیں

  



لاہور(نامہ نگار)نیب نے 56 سرکاری کمپنیوں اور دیگر کرپشن کی انکوائریاں مکمل کرنے اور قانونی تقاضے پورے کرنے کے لئے احتساب عدالتوں کے پراسیکیوٹرز کی خدمات حاصل کرلی ہیں۔ نیب کے تفتیشی افسران کو ہدایت کی کہ قانونی تقاضے پورے کرنے کے لئے اگر پراسیکیوٹرز کی مدد درکار ہو تو فوری رابطہ کیا جائے۔

آئندہ 48گھنٹوں بعد موسلادھار اور کہیں درمیانے درجے کی بارش کا امکان

چیئرمین نیب نے متعلقہ ریجن ڈائریکٹرز کو ہدایت کی ہے کہ انکوائری کے دوران کسی کو بلا وجہ تنگ نہ کیا جائے، نہ ہی کسی کا کام انکوائری مکمل ہونے تک متاثر کیا جائے ،انکوائری کرتے وقت تمام قانونی تقاضے پورے ہونے چاہئیںتاکہ ریفرنس عدالت میں پیش کرتے وقت کوئی خامی نہ رہے،اس کے لئے عدالتی پراسیکیوٹرز سے رابطے میں رہنا چاہیے ، نیب نے سرد خانوں میں پڑی کوآپریٹو سیکنڈل اور تاج کمپنی سیکنڈل کی بھی انکوائریاں ری اوپن کرنے کا فیصلہ کیا ہے، اس میں جوبھی ذمہ دار ہے سامنے لانے کاحکم دیاگیاہے،نیب کو ہدایت کی گئی ہے کہ کوئی کتنا بھی بااثر ہو اسے معاف نہ کیا جائے لیکن بلاوجہ کسی کو تنگ نہ کیا جائے۔ انکوائری مکمل ہونے پر اگر وہ شخص ذمہ دار ہے تو اس کے خلاف کارروائی کی جائے۔مذکورہ بالا ہدایات ملنے کے بعدنیب کے تمام تفتیشی افسران متحرک ہو گئے ہیں جہاں انہیں قانونی مشاورت کی ضرورت ہے اوراپنی نیب کی لیگل ٹیم سے مشاورت شروع کردی ہے۔ نیب کے پراسیکیوٹرز سے بھی کہا گیا ہے کہ وہ نیب آفس سے رابطے میں رہیں.

مزید : لاہور