اخلاق کے ذریعے دشمنوں کو بھی گرویدہ کیا جا سکتاہے،محرمہ علی

  اخلاق کے ذریعے دشمنوں کو بھی گرویدہ کیا جا سکتاہے،محرمہ علی
   اخلاق کے ذریعے دشمنوں کو بھی گرویدہ کیا جا سکتاہے،محرمہ علی

  



لاہور(فلم رپورٹر)اداکارہ و گلوکارہ محرمہ علی نے کہا کہ فن میں مقابلے بازی کا رجحان ضرور ہونا چاہیے لیکن رقابت نہیں ہونی چاہیے کیونکہ اس سے دلوں میں بے وجہ دشمنی پیدا ہوتی ہیں۔ہمیں خوش اخلاقی سے رہنا چاہیے اور اس پر کوئی خرچ نہیں آتا۔ خوش اخلاقی سے دشمنوں کوبھی اپنا گرویدہ بنایا جا سکتا ہے۔محرمہ علی نے کہا ہے کہ یہ درست ہے کہ شوبزمیں دوسرے شعبوں کی نسبت حسد کی بیماری زیادہ پھیلی ہوئی ہے لیکن اگر انفرادی طور پر اپنے اپنے کردار کا جائزہ لیا جائے تو سب لوگ ہی اس بیماری میں مبتلا ہیں،خوبصورت اخلاق کے ذریعے دشمنوں کو بھی اپنا گرویدہ کیا جا سکتاہے۔ انہوں نے کہا کہ کوئی بھی اداکارہ جو اچھی پرفارمنس دیتی ہے وہی پروڈیوسر اور ہدایتکار کی بھی پہلی ترجیح ہوتی ہے۔

اس لئے ہم کیوں ایک دوسرے کی مخالفت میں اندھے ہو جاتے ہیں۔

ہمیں منفی کی بجائے مثبت رجحانات کو فروغ دینا چاہیے اور ایسے رویے کسی بھی شعبے کے عروج کا سبب بنتا ہے۔

مزید : کلچر