رانا ثناء اللہ کیس، فرد جرم عائد کرنے سے قبل فوٹیج اور کال ڈیٹا عدالتی ریکارڈ کا حصہ بنانے کیخلاف دائر درخواست نمٹا دی گئی

رانا ثناء اللہ کیس، فرد جرم عائد کرنے سے قبل فوٹیج اور کال ڈیٹا عدالتی ریکارڈ ...

  



لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائیکورٹ نے رانا ثناء پر فرد جرم عائد کرنے سے قبل سی سی ٹی وی فوٹیج اور کال ڈیٹا کے ریکارڈ کو عدالتی ریکارڈ کا حصہ بنانے کے خلاف دائر اے این ایف کی درخواست واپس لینے کی بنیاد پر نمٹا دی۔اے این ایف کی درخواست میں موقف اختیار کیا گیا تھا کہ انسداد منشیات کی عدالت کے ڈیوٹی جج نے 18اکتوبرکوکال ڈیٹا ریکارڈ اور سی سی ٹی وی فوٹیجز کو عدالتی ریکارڈ کا حصہ بنانے کا حکم دیاجبکہ ابھی فردجرم عائد نہیں ہوئی،ڈیوٹی جج نے اہم ثبوتوں کو ریکارڈ کا حصہ بنا کر فرد جرم عائد کرنے سے پہلے نیا پنڈورا باکس کھول دیا، ڈیوٹی جج کے اقدام کو کالعدم کیا جائے۔گزشتہ روز اے این ایف نے اپنی یہ درخواست واپس لے لی۔

مزید : علاقائی