پی پی،پی ٹی آئی ارکان اسمبلی کے الیکشن کمیشن سے رابطے،شوکاز نوٹسز کی کاپیاں حاصل کیں 

پی پی،پی ٹی آئی ارکان اسمبلی کے الیکشن کمیشن سے رابطے،شوکاز نوٹسز کی کاپیاں ...

  



 اسلام آباد (این این آئی)ارکان قومی اسمبلی کے خلاف کرپٹ پریکسٹز کے تحت کارروائی اور شوکاز نوٹس کا معاملہ،سیاسی جماعتوں نے الیکشن کمیشن کے اقدام کو سنجیدہ لینا شروع کردیا۔ ذرائع کے مطابق پیپلزپارٹی اور پی ٹی آئی نے الیکشن کمیشن سے رابطے کر کے اپنے ارکان اسمبلی کے خلاف کارروائی کی تفصیلات معلوم کیں۔ ذرائع نے بتایاکہ بلاول بھٹو زرداری،آصف علی زرداری نے الیکشن کمیشن سے رابطہ کیا،بلاول بھٹو زرداری،آصف علی زرداری کے وکلاء نے الیکشن کمیشن سے اثاثہ جات میں تضاد بارے معلومات حاصل کیں۔ذرائع کے مطابق بلاول بھٹو زر داری کے وکلاء نے موقف اختیار کیا کہ ہمیں کبھی خط یا شوکاز نوٹس نہیں ملا،الیکشن کمیشن نے شوکاز نوٹس کی کاپی پیپلزپارٹی کوفراہم کردی۔ پیپلز پارٹی کے وکلاء نے کہاکہ آئندہ چند روز اثاثہ جات پر اعتراضات دور کردینگے۔ ذرائع کے مطابق وفاقی وزیر فواد چوہدری،شیریں مزاری،عامر کیانی،نور عالم خان دیگر نے شوکاز نوٹس کی کاپی حاصل کرلی۔ ذرائع نے بتایاکہ الیکشن کمیشن نے پی ٹی آئی کے 20 ارکان سمیت 45 قومی اسمبلی کو شوکاز نوٹس جاری کررکھا ہے،چودہ روز میں شوکاز نوٹس کا جواب نہ ملنے پر الیکشن کمیشن ارکان قومی اسمبلی کو زاتی حیثیت میں طلب کریگا۔ذرائع کے مطابق اثاثہ جات میں تضاد،غلط بیانی دور نہ ہونے پر ارکان اسمبلی نااہل ہوسکتے ہیں۔

شوکاز نوٹسز

مزید : صفحہ آخر