عوامی ریلیف میں ناکام حکومت مستعفی ہوجائے،صالح قریشی

  عوامی ریلیف میں ناکام حکومت مستعفی ہوجائے،صالح قریشی

  



ٹانک(نمائندہ خصوصی)مہنگائی اور بے روزگاری ہر قابونہ پانے والے نااہل حکمران فوری طور پر مستفی ہوجائے 50 لاکھ گھروں کی تعمیر کے جھوٹے اعلانات کرنے والے اب 400 مندروں کو تعمیر کرکے کروڑوں پاکستانیوں اور کشمیری عوام کی دل آزاری کررہاہے پارلیمنٹ میں ملک کو درپیش مشکلات مہنگائی،بے روزگاری اور دیگر ترقیاتی کاموں کی بجائے ٹماٹروں کی افادیت اور قیمت کی اتار چڑھاو کو زیر بحث لانا حکومتی نااہلی کی واضع ثبوت ہے ان خیالات کا اظہار جنوبی وزیرستان سے تعلق رکھنے والے سابق سنیٹر مولانا صالح شاہ قریشی نے میڈیا کے نمائندوں سے خصوصی گفتگوکے دوران کیا ان کا کہناتھا کہ گزشتہ دنوں سے سوشل،پرنٹ اور الیکٹرانکس میڈیا پر ٹماٹروں کی اتارچڑھاو اور افادیت پر بحث پر مباحثے جاری ہے جس کے باعث دنیا میں پاکستان کی امیج خراب ہورہی ہے اور حکومتی صلاحیت اور کارکردگی کے لئے باعث شرم ہے ان کا کہناتھا کہ ایکسویں صدی میں دیگر ترقیافتہ ممالک چاند پر کمند ڈال رہے ہیں جبکہ ہمارے نااہل حکمران ملک میں مہنگائی کوکنٹرول اور نوجوان نسل کو باعزت روزگار دینے کی بجائے فضول کاموں پر وقت ضائع کررہاہے ان کاکہنا تھا کہ ملک کے مقتدر قوتوں اور دیگر بااختیار ملکی اداروں کو چاہئے کہ پاکستان عوام کو اس نااہل حکمرانوں سے جان خلاصی کے لئے اقدامات اٹھائے اور حزب اختلاف اس وقت تمام اجلاسوں کا بائیکاٹ کرے جب تک موجودہ حکمرانوں کو ملکی خزانے کو فضول کاموں پر خرچ کرنے سے نہ روکا جائے ان کا کہنا تھا کہ 50 لاکھ گھروں کی تعمیر بجائے 400 مندروں کی تعمیر سے یہ اندازہ لگانا مشکل نہیں کہ وہ ہندوستان کو خوش کرنے کے لئے ملکی وسائل کو ضائع کررہے ہیں اگر وزیراعظم عمران خان ہندوستان کا اتنا خیرخواہ ہے تو اس کو پاکستانی شہریت ترک کرکے انڈین شہریت لینا چاہئے،

مزید : پشاورصفحہ آخر