آئی ٹی ایف نے پاکستان کی اپیل مسترد کردی

آئی ٹی ایف نے پاکستان کی اپیل مسترد کردی
آئی ٹی ایف نے پاکستان کی اپیل مسترد کردی

  



لاہور(ویب ڈیسک)انٹرنیشنل ٹینس فیڈریشن نےڈیوس کپ ٹائی نیوٹرل مقام پر کروانے کے خلاف پاکستان کی اپیل مسترد کرتے ہوئے پاک بھارت ڈیوس کپ ٹائی قازقستان منتقل کرنے کا اعلان کردیا۔پاکستان نے ڈیوس کپ ٹائی نیوٹرل مقام پر کروانے کے خلاف اپیل دائر کی تھی، لیکن انٹرنیشنل ٹینس فیڈریشن نے پاکستان کی اپیل مسترد کردی ہے جس کے بعد ڈیوس کپ ٹائی 29 اور 30 نومبر کو آستانہ(قازقستان ) میں کھیلی جائے گی۔اس حوالے سے پاکستان ٹینس فیڈریشن کا کہنا ہے کہ پاکستان میں سیکورٹی کا کوئی مسئلہ نہیں ہے۔

یاد رہے کہ انٹرنیشنل ٹینس فیڈریشن نے پاکستان اوربھارت کے مابین ہونے والے ڈیوس کپ ٹائی کی میزبانی پاکستان سے واپس لے کر نیوٹرل مقام پر منتقل کرنے کا اعلان کیا تھا۔پاکستان اوربھارت کا مقابلہ رواں ماہ کے اختتام پر 29 اور 30 نومبر کو اسلام آباد میں ہونا تھا۔انٹرنیشنل ٹینس فیڈریشن کا کہنا تھا کہ اسے کھلاڑیوں اورآفیشلزکی سیکیورٹی سب سے زیادہ عزیز ہے۔

آل انڈیا ٹینس ایسوسی ایشن نے آئی ٹی ایف سے ٹائی کو غیر جانبدار مقام پر منتقل کرنے کو کہا تھا۔ آئی ٹی ایف نے ایک بیان میں کہا کہ "ڈیوس کپ ضابطے کے مطابق اب پاکستان ٹینس فیڈریشن کے پاس غیر جانبدار مقام کو نامزد کرنے کا اختیار ہے اور اس فیصلے کے لیے پاکستان کو 5 روز دیے گئے ہیں۔" اس سے قبل یہ مقابلہ 14 اور 15ستمبر کو اسلام آباد میں ہونا تھا تاہم آئی ٹی ایف نے دونوں ممالک کے درمیان کشیدگی کے باعث اس کی تاریخ آگے بڑھا دی تھی۔

اس فیصلے سے قبل قومی ٹینس کھلاڑی اعصام الحق اور عقیل خان نیوٹرل مقام پر ٹورنامنٹ میں شرکت سے انکار کر چکے ہیں۔ ن کا کہناتھا کہ ڈیوس کپ ٹائی کی پاکستان سے منتقلی سے ہمارے سیکیورٹی اداروں کا مذاق اڑایا گیا،کھیل اور سیاست کو ملانا غلط فیصلہ ہے، انٹرنیشنل ٹینس فیڈریشن اپنے فیصلے پر نظر ثانی کرے۔

مزید : کھیل