آمدن بڑھانے کیلئے فریٹ پر توجہ دینی ہوگی، نامکمل انکوائریز کو مکمل کیا جائے: اعظم سواتی 

آمدن بڑھانے کیلئے فریٹ پر توجہ دینی ہوگی، نامکمل انکوائریز کو مکمل کیا جائے: ...

  

لاہور( لیڈی رپورٹر،این این آئی)وفاقی وزیر ریلوے اعظم خان سواتی نے کہا ہے کہ محکمے کا ریونیو بڑھانے کے لئے فریٹ پرتوجہ دینی ہو گی، کوچز کی کمی کو پورا کرنے کے لئے ہرممکن اقدامات کئے جائیں جہاں بھی ڈی ریلمنٹ ہو پورے وسائل لگا کر فوری ٹریک کلیئر کریں تاکہ مسافروں کو کوئی پریشانی نہ ہو،مزدوروں کو اپنا اثاثہ سمجھیں اور ان کے اچھے کام کو سراہیں۔ ان خیالات کا اظہار وفاقی وزیر ریلوے محمد اعظم خان سواتی نے ریلوے ہیڈکوارٹرز آفس لاہورمیں ایک اعلی سطحی اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔ اجلاس میں یکم جولائی سے 15 نومبر 2021  تک ٹارگٹ کے مطابق آمدن کے ہدف کا حصول،ٹرینوں کی بروقت آمدورفت،کوچز کی کمی، پٹری ٹوٹنے کے واقعات، حادثات سے متعلق کیسز، لیول کراسنگ پر حادثات کو روکنے کے لیے اقدامات، زمینوں کی لیزنگ اور ڈویلپمنٹ پلان کے موضوع زیر بحث آئے۔وفاقی وزیرریلوے اعظم خان سواتی نے کہا کہ جتنی بھی انکوائریزنا مکمل ہیں ان کو فوری طور پر مکمل کیاجائے کوئی بھی انکوائری التواء میں نہ رہے،جس پر الزام ثابت نہ ہو تو اسے بحال کریں اور اگر کسی کے خلاف الزام ثابت ہوتاہے تو اس کو محکمانہ قوانین کے مطابق سزا دلوائیں۔ورکشاپس میں کام میں ٹرینڈ اور ماہر لوگوں کو پروموٹ کریں ریلوے کی آپریشنل زمینوں کے علاوہ باقی تمام زمینوں کو آٹ سورس کریں گے۔ ریلوے کی جو زمینیں قابضین کے پاس ہیں وہ بہت جلد ریلوے سسٹم کا حصہ بنائیں گے۔ یہ کام میرے دور میں ہی ممکن ہوگا۔ انہوں نے مزید کہا کہ چوری کو ہرحالت میں روکنے کے لیے پیٹرولنگ کے نظام کو مزید موثر بنانا ہوگا۔وفاقی وزیر ریلوے محمد اعظم خان سوانی نے کہا کہ ادارے کو چلانے کے لیے مینجمنٹ اگر بہتر ہوگی توریلوے بہتر انداز میں چلے گی۔ آپ لوگ ادارے کی بہتری کے لئے اپنی ٹیم بنا کر چلیں اور ان سے رزلٹ حاصل کریں  وفاقی وزیر ریلوے محمد اعظم خان سواتی نے کہا ہے کہ ٹرینوں کی بروقت روانگی کو یقینی بنایا جائے۔ ٹرینوں کی پنکچوالیٹی کو مزید بہتر بنانے کی ضرورت ہے اس کے علاوہ پی آر ایف ٹی سی کے سی ای او نے وفاقی وزیر ریلوے کو فریٹ یارڈ، ٹرمینل سہولیات اور مستقبل کے بارے میں بریفنگ دی۔اجلاس میں سیکرٹری/چیئرمین ریلویز حبیب الرحمن گیلانی، چیف ایگزیکٹیو آفیسر ریلویز نثار احمد میمن کے علاوہ ایڈیشنل جنرل منیجر انفراسٹرکچر ارشد سلام خٹک، ایڈیشنل جنرل منیجر ٹریفک سید مظہر علی شاہ،ایڈیشنل جنرل منیجر مکینکل سلمان صادق شیخ کے علاوہ سینئر افسران اور ویڈیو لنک کے ذریعے ڈی ایسز نے شرکت کی۔لیڈی رپورٹرکے مطابق وفاقی وزیر ریلوے محمد اعظم خان سواتی نے آج لاہور ریلوے اسٹیشن کا اچانک دورہ کیااور مسافروں کے مسائل سنے اور مسائل کے فوری ازالے کے لیے متعلقہ افسران کو ہدایات جاری کیں  وفاقی وزیر ریلوے محمد اعظم خان سواتی نے اسٹیشن پر موجود کمروں کو خالی کروا کر ویٹنگ روم بنانے کا حکم دیا وفاقی وزیر ریلوے نے لاہور ریلوے اسٹیشن پر مسافروں کے ساتھ ناروا سلوک دیکھ کر انتہائی افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ مجھے دکھ ہوا کہ مسافر ٹرین کے انتظار میں پچھلے سات گھنٹے سے زمین پر بیٹھے ہیں اور ان کا کوئی پرسان حال نہیں۔وفاقی وزیر ریلوے نے کہا کہ  جو میرے مسافروں کی عزت نہیں کرے گا وہ کسی رعایت کا مستحق نہیں ہے۔لاہور ریلوے اسٹیشن کے دورہ کے موقع پر وفاقی وزیر ریلوے نے کہا کہ میں ہاتھ باندھ کر ان بچیوں سے بھی معافی مانگتا ہوں جو ٹرین کے انتظار میں 7گھنٹے سے زمین پر بیٹھی تھیں وہ میرے ذہن سے نہیں جارہیں۔ اب یہ ظلم ختم ہوگا اگر کوئی میرے مسافروں کو عزت نہیں دے گا تو ریلوے میں اس کے لیے کوئی عزت نہیں ہے۔وفاقی وزیر ریلوے نے واقعہ کو فوری نوٹس لیتے ہوئے ڈویژنل سپرنٹنڈنٹ لاہور ناصر خلیلی،ڈویژنل کمرشل آفیسرانور سادات مروت اور ڈویژنل ٹرانسپورٹیشن آفیسر شاہد رضا کو فی الفوران کے عہدے سے ہٹادیا۔ 

اعظم سواتی

مزید :

صفحہ آخر -