حکومت سندھ نالہ متاثرین کو تنہا  نہیں چھوڑسکتی،سیدناصرحسین شاہ

حکومت سندھ نالہ متاثرین کو تنہا  نہیں چھوڑسکتی،سیدناصرحسین شاہ

  

کراچی(سٹاف رپورٹر)وزیر بلدیات سندھ سید ناصر حسین شاہ نے کہا ہے کہ حکومت سندھ کسی بھی صورت نالہ متاثرین کو تنہا نہیں چھوڑ سکتی اور متاثرہ خاندانوں کی جلد ازجلد بحالی کی جائے گی۔جمعہ کو وزیربلدیات سندھ سید ناصر حسین شاہ کی صدارت میں گجر نالہ، محمود آباد اور اورنگی نالے کے متاثرین کی آبادکاری اور ازسرنوبحالی کے موضوع پراجلاس  ہوا۔اجلاس میں سیکرٹری لوکل گورنمنٹ انجینئر سید نجم احمد شاہ، ایم ڈی واٹر بورڈ، ایم ڈی سندھ سالڈ ویسٹ، ڈی جی ایل ڈی اے سمیت متعلقہ افسران شریک تھے۔اس موقع پر بریفنگ دیتے ہوئے سیکرٹری لوکل گورنمنٹ انجینئر سید نجم احمد شاہ نے وزیر بلدیات سندھ کو بتایا کہ عدالت عالیہ کے احکامات کی روشنی میں انسداد تجاوزات آپریشن کے نتیجے میں گجر، محمود آباد اور اورنگی نالہ متاثرین کی آبادکاری کا عمل جلداز جلد یقینی بنانے کے حوالے سے اقدامات بروئے کار لائے جارہے ہیں اور ابتدائی مسودہ تیار کیا جاچکا ہے جس کے تحت مناسب اور موضوع مقام پر تمام سہولیات زندگی کی فراہمی کے ساتھ نالہ متاثرین کی بحالی اور آبادکاری کا عمل مکمل کیا جائے گا۔وزیر بلدیات سندھ سید ناصر حسین شاہ کا کہنا تھا کہ حکومت سندھ کسی بھی صورت نالہ متاثرین کو تنہا نہیں چھوڑسکتی اور متاثرہ خاندانوں کی جلد از جلدبحالی کا عمل سر انجام دیا جائے گا۔ناصر حسین شاہ کے مطابق حکومت سندھ کم آمدنی والے افراد کے لئے چھوٹی لاگت سے تیار شدہ گھروں کی فراہمی کے منصوبے پر کام کررہی ہے اور جب تک تمام نالہ متاثرین کی بحالی و آبادکاری عمل میں نہیں آتی تب تک حکومت سندھ سکھ کا سانس نہیں لے گی۔وزیر بلدیات سندھ نے ایم ڈی واٹر بورڈ کو ہدایات دیتے ہوئے کہا کہ نالہ متاثرین کی آبادکاری کے حوالے سے مجوزہ سائٹ کا فوری طور پر دورہ کیا جائے اور پانی و سیوریج لائنوں کی فراہمی کے منصوبے کوعملی جامہ پہنایا جائے۔سیکرٹری بلدیات سندھ انجینئر سید نجم احمد شاہ نے بتایا کہ نالہ متاثرین کی مکمل آبادکاری کے حوالے سے اسکیم 42 اور تیسر ٹاون زیر غور ہے مگر کسی بھی حتمی فیصلے سے قبل تمام ضروریات زندگی کی فراہمی کو ہر صورت یقینی بنایا جائے گا۔

مزید :

صفحہ اول -