برھتی عمر کے افراد ہڈیوں کی دیکھ بھال پر خصوصی توجہ دیں‘ڈاکٹرآمنہ محسن

برھتی عمر کے افراد ہڈیوں کی دیکھ بھال پر خصوصی توجہ دیں‘ڈاکٹرآمنہ محسن

  

لاہور(پ ر)آسٹیو پوروسیس کی وجہ سے دنیا بھر میں 50سال سے زائد عمر کے ہر پانچ میں سے ایک مرد اور ہر تین میں سے ایک عورت کی ہڈیاں ٹوٹ پھوٹ کا شکار ہو جاتی ہیں ۔ پاکستان میں یہ بیماری لاکھوں لوگوں کی زندگیاں متائثر کر رہی ہے۔ یہ بات آسٹیو پوروسیس ڈے کے حوالے سے شوکت خانم ہسپتال کی کنسلٹنٹ نیوکلیر فزیشن ڈاکٹر آمنہ حسن نے ایک انٹرویو میں کہی۔ ان کا کہنا تھا کہ اس بیماری میں ہڈیاں انتہائی کمزور ہو جاتی ہیں اور ہلکے سے جھٹکے یا ٹھوکر لگنے سے بھی فریکچر ہونے کا خدشہ رہتا ہے۔ اس مرض کی علامات واضح نہ ہونے اور اس حوالے سے کم علمی کے باعث زیادہ تر مریض مرض کی شدت سے اس وقت آگاہ ہوتے ہیں جب کوئی ہڈی ہ فریکچر ہو جاتی ہے۔ ہڈی کا ٹوٹنا دراصل آسٹیو پورسیس کی پہلی علامت ہو سکتی ہے اس کے علاوہ مریض کو کمر میں جھکاؤ کا سامنا بھی کرنا پڑ سکتا ہے۔ خواتین میں آسٹیو پوریسس کا تعلق سن یاس سے قبل ہونے والی ہارمونز کی تبدیلی سے بھی ہوتا ہے۔

خواتین میں ایسٹروجن اور مردوں میں اینڈروجن ہارومونز کی کمی سے ہڈیوں کی کمزوری کا عمل شروع ہو جاتا ہے ۔ اس کے علاوہ دیگر وجوہات میں زیادہ دیر بیٹھ کا کام کرنا، غیر فعال معمولات، سموکنگ، خاندان میں آسٹیو پوریسیس کا ہونا ، سٹیرائڈ ادویات کا طویل مدت تک استعمال ، خوراک میں کیلشیم اور وٹامن ڈی کی کمی ہونا ، شامل ہیں ۔

مینو پاز ہونے کے بعد خواتین اور ایسے مرد و خواتین جن کو یہ مرض لاحق ہوں وہ باقاعدگی سے ہڈیوں کے ڈاکٹرکو چیک اپ کروائیں۔

ڈاکٹر آمنہ کا کہنا تھا کہ ہماری ہڈیاں مستقل نشونما کے عمل سے گزرتی رہتی ہیں اس لیے ضروری ہے کہ ان کی مناسب دیکھ بھال کی جائے۔باقاعدہ ورزش، خاص طور پر ایسی ورزش جس میں وزن استعمال کیا جائے ہماری ہڈیوں کو مظبوط بناتی ہے ۔ البتہ ورزش کا عمل ہڈیوں کی مظبوطی اور طاقت کے حساب سے ہی کیا جانا چاہیے۔ ایسے افراد جنہیں آسٹیو پورسیس یا آسٹیوپینیا ہو ، ان کی ہڈیاں زیادہ وزن اٹھانے سے ٹوٹ سکتی ہیں۔

آسٹیو پوریسس ایسی صرف خطرناک بیماری ہے جس کے دیگر سائڈ افیکٹس بھی ہیں۔ ہڈی ٹوٹنے سے مریض کی نقل و حرکت محدود ہو جاتی ہے جس سے وہ تنہائی اور ڈیپریشن کا شکار ہو جاتا ہے۔ بد قسمتی سے ایسے20فیصد بزرگ افراد جن کی کولہے کی ہڈی ٹوٹ جائے فریکچر کی پیچیدگی کے باعث ایک سال کے عرصے میں انتقال کر جاتے ہیں ۔ آ سٹیو پورسیس بڑھتی عمر کے ساتھ ہونے والے کیفاسس( کمر میں پیدا ہونے والا خم) کی بھی ایک بڑی وجہ ہے ۔

مزید :

کامرس -