سنی تحریک کا ناموس رسالت ؐ ایکٹ کیخلاف ملک گیر احتجاجی تحریک چلانے کا اعلان

سنی تحریک کا ناموس رسالت ؐ ایکٹ کیخلاف ملک گیر احتجاجی تحریک چلانے کا اعلان

  

لاہور (ایجوکیشن رپورٹر) سر براہ سنی تحریک محمد ثروت اعجاز قادری نے کہا ہے کہ حکومت قوم کو اعتماد میں لے سینٹ میں جاری تحفظ ناموس رسالت قانون میں ترمیم پر ملک گیر حکومت مخالف احتجاجی تحریک چلائیں گے ۔موجودہ حکومت نے پارلیمنٹ میں تحفظ توہین رسالت ﷺ میں کسی بھی طرح کی ترمیم کی وہ قبول نہیں کی جائے گی،حکومت قوم کو اعتماد میں لے ۔سپریم کورٹ ماتحت عدالتوں سے سزا پانے والی آسیہ معلونہ کی پھانسی پر فوری عمل درآمد یقینی بنائے،غیر ملکی ایجنڈا نافذ ہونے نہیں دیں گے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے آج جمعۃالمبارک میں سنی تحریک کے زیر اہتمام ملک گیرمنائے جانے والے یوم تحفظ ناموس رسالت کے موقع پر اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔جبکہ اس موقع پر محمد شا ہد غوری ، محمد شاداب رضا ،ڈاکٹر شاہدحسین ،محمد زاہد قادری ، ڈاکٹر عمران مصطفی ،انعام اللہ خان ،محمد علی جتک ،نور احمد قاسمی ،ضلع لاہور کے صدر علامہ شریف الدین قضافی ، علامہ غلام محی الدین ، قاری سیف اللہ نقشبندی، و دیگر رہنماؤں نے مختلف اجتماعا ت سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ ملک میں موجود اسلام دشمن لابی کی منفی سرگرمیاں ختم نا کی گئیں تو حکومت مخالف تحریک چلائیں گے۔

،دینی مدارس کا محاسبہ حکومت مہنگا پڑیگا۔حکومت نے اپنے ابتدائی سو دنوں میں ہی دینی جماعتوں ،مدارس اور شخصیات کو احتجاج کی راہ اختیار کرنے پر مجبور کر دیا ہے ۔ملک کے قوانین میں یقینی طور پر اصلاحات کی ضرورت ہے مگر حکومت تحفظ تو ہین رسالت قانون کو غیر موچر بنانے کیلئے جو اقدامات اٹھانا چاہتی ہے اس کا خمیازہ حکومت کو بھگتنا پڑے گا۔غیر ملکی ایجنڈا پاکستان پر مسلط کرنے کی حکومتی کی کسی بھی کوشش کو کامیاب نہیں ہو نے دیں گے ۔سر براہ سنی تھریک محمد ثروت اعجاز قادری نے کہاکہ ملک بھر میں کارکنان کی طرف سے احتجاج کا جاری سلسلہ میں وسعت دی جائے گی ۔حکومت دینی جماعتوں ،علماء اور عمائدین کو اعتماد میں لے ۔آسیہ معلونہ کو اگ رکسی بھی معاہدہ کے تحت ملک سے رہا کر کے فرار کروانے کی کوشش کی گئی تو ذمہ داری موجودہ حکمران جماعت پر آئد ہو گی ۔سنی تحریک کے زیر اہتمام آئندہ چند یو م میں دینی و سیاسی جماعتوں کی آل پارٹی کانفرنس طلب کی جائے گی،جبکہ آسیہ معلونہ کی سزا پر عملدرآمد کو یقینی بنانے کیلئے احتجاجی تحریک کو منظم کیا جائیگا ۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -