فرقہ واریت اور انتہا پسندی امن کی دشمن ہے،طاہر القادری

فرقہ واریت اور انتہا پسندی امن کی دشمن ہے،طاہر القادری

  

لاہور(ایجوکیشن رپورٹر)قائد تحریک منہاج القرآن و سربراہ پی اے ٹی ڈاکٹر محمد طاہر القادری نے مرکزی سیکرٹریٹ میں علماء مشائخ کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ علمائے کرام اصلاح معاشرہ اور اعلیٰ دینی،اخلاقی اقدار کی ترویج و اشاعت اور نوجوانوں کی کردار سازی پر توجہ مرکوز کریں، علمائے کرام اپنے اصلاحی، تبلیغی ،تدریسی کام میں جدت لائیں ،مطالعہ کو وسعت دیں تاکہ وہ پڑھی لکھی نوجوان نسل کے ساتھ ان کے ذہنی علمی معیار کے مطابق تبادلہ خیالات کر سکیں،ترقی و خوشحالی کے اہداف حاصل کرنے کیلئے فروغ علم کے ساتھ ساتھ پاکستان کو امن کا گہوارہ بنانا ہوگا اور یہ کام علمائے کرام سے بہتر اور کوئی نہیں کر سکتا، فرقہ واریت اور انتہا پسندی علم،امن کی سب سے بڑی دشمن ہے،علمائے کرام بدلتے ہوئے حالات و واقعات کے تناظر میں شرعی احکامات کے بارے میں امت کی رہنمائی کریں ۔کنونشن میں ملک بھر سے 500سے زائد علمائے کرام اور علوم اسلامیہ کے سینئر طلبہ نے شرکت کی۔کنونشن کااہتمام منہاج علماء کونسل کی طرف سے کیا گیا۔کنونشن سے علامہ امداد اللہ قادری، علامہ فرحت حسین شاہ، علامہ آصف اکبر میر،علامہ شہزاد مجددی،مفتی نعیم جاوید نوری، مفتی عرفان اللہ اشرفی، سید علی عابد مشہدی، سید ہدایت رسول شاہ نے خطاب کیا۔ انہوں نے کہا کہ اسلام ابدی دین ہے اسکے احکام کو بقا اور دوام حاصل ہے۔اسلام کی جملہ تعلیمات میں اللہ رب العزت نے آفاقیت اور ہمہ گیریت رکھی ہے ،زندگی،جمود اور تعطل کا نام نہیں ہے بلکہ یہ تحرک،تغیر و تبدل کا نام ہے۔زندہ قومیں تغیرات،احوال و انقلابات زمانہ سے سیکھتی ہیں ۔آج ہر علم باقاعدہ سائنس بن چکا ہے۔

طاہر القادری

مزید :

صفحہ آخر -