چین جرمنی کا سب سے بڑا تجارتی شراکت دار بن گیا

چین جرمنی کا سب سے بڑا تجارتی شراکت دار بن گیا

  

چھنگ تاؤ(آئی این پی/شِنہوا)چین اور جرمنی کے درمیان دوطرفہ سرمایہ کاری کا حجم40ارب ڈالرتک پہنچ گیا ہے،دونوں ممالک اس سال سائنس اور ٹیکنالوجی میں تعاون کے معاہدے کی40ویں سالگرہ منا رہے ہیں۔یہ بنیادی معاہدہ ہے جس کی وجہ سے دونوں ممالک کے درمیان تعاون کو فروغ حاصل ہوا۔ اور اب دوطرفہ تعاون ہر شعبے میں اور اعلیٰ سطح تک ویسع ہو گیا ہے،فروغ سرمایہ کاری ایجنسی کے نائب سربراہ لی یانگ نے چھنگ تاؤ میں بتایا ہے کہ دونوں ممالک کے درمیان تجارتی حجم گذشتہ سال168.1ارب ڈالر تک پہنچ گیا تھا جو یورپ کے ساتھ چینی تجارت کا تقریباً30فیصد ہے۔چین گذشتہ2سال سے جرمنی کا سب سے بڑا تجارتی شراکت دار ہے۔چینی حکومت کھلے پن کی پالیسی پر مزید عمل کر رہی ہے اور وہ ملک میں غیر ملکی کاروباری اداروں کے حقوق کے تحفظ کے لیے کام کر رہی ہے۔

مزید :

عالمی منظر -