یونیورسٹیوں سے الحاق شدہ کالجز پر از خود داخلے کرنے پر پابندی

یونیورسٹیوں سے الحاق شدہ کالجز پر از خود داخلے کرنے پر پابندی

  

لاہور(ایجوکیشن رپورٹر) فیڈرل ہائر ایجوکیشن کمیشن نے پبلک سیکٹر یونیورسٹیوں سے الحاق شدہ کالجز پر خود سے داخلے کرنے پر پابندی عائد کر دی ۔فیڈرل ایچ ای سی نے نوٹیفکیشن جاری کردیا ۔تفصیلات کے مطابق فیڈرل ہائر ایجوکیشن کمیشن نے سرکاری یونیورسٹیوں سے الحاق شدہ کالجز کے از خود(بقیہ نمبر47صفحہ12پر )

داخلے کرنے کا نوٹس لیتے ہوئے مذکورہ کالجز پر خود سے داخلے کرنے پر پابندی عائد کر دی ہے اور ملحقہ کالجز میں داخلوں کا اختیار بھی یونیورسٹیوں کو سونپ دیا گیا۔اس حوالے سے وفاقی ایچ ای سی نے یونیورسٹیز کے سب کیمپسز کی تعداد میں اضافے کو بھی غیر ضروری قرار دے دیا ہے ،فیڈرل ایچ ای سی کیے نوٹیفکیشن کے مطابق آئندہ الحاق شدہ کالجز صرف یونیورسٹیز میں آفر ہونے والی ڈگریوں میں ہی داخلہ کرنے کے مجاز ہوں گے۔اس حوالے سے فیڈرل ہائیر ایجوکیشن کمیشن پاکستان نے تمام جامعات کے وائس چانسلرز کو احکامات جاری کیے ہیں کہ داخلوں کا اشتہار ملحقہ کالج کے بجائے یونیورسٹی جاری کرے گی ۔نوٹیفکیشن میں یہ بھی ہدایات جاری کی گئی ہیں کہ تمام پبلک یونیورسٹیاں ایچ ای سی قواعد و ضوابط کے تحت کالجوں سے الحاق کریں۔قواعد و ضوابط سے ہٹ کر کالجز سے الحاق پر یونیورسٹیز کے خلاف کارروائی عمل میں لائی جائے گی ۔ایچ ای سی کی جانب سے مراسلے میں کہا گیا ہے کہ سب کیمپسز غیر تربیت یافتہ گریجویٹس کی کھیپ پیدا کر رہے ہیں اور سب کیمپسز کا تعلیمی معیارکسی طور پر بھی ملک کی سماجی ترقی میں کردار ادا نہیں کر رہا، اسی لئے کھمبیوں کی طرح اگنے والے ان سب کیمپسز کی گروتھ کو روکنے کی ضرورت ہے۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -