پاپولیشن ویلفیئر ریگولر پراجیکٹ کے سینکڑوں ملازمین 6ماہ کی تنخواہوں سے محروم

پاپولیشن ویلفیئر ریگولر پراجیکٹ کے سینکڑوں ملازمین 6ماہ کی تنخواہوں سے محروم

  

نوشہرہ(بیورورپورٹ)پا پولیشن ویلفیئر خیبرپختونخوا کے ریگولر پراجیکٹ کے سینکڑوں ملازمین چھ ماہ کی تنخواہوں سے محروم سینکڑوں ملازمین کے گھروں کے چولہے ٹھنڈے جبکہ ملازمین بچوں سمیت بنیادی سہولیات کو بھی ترس گئے تاحال کئی ملازمین کو مستقل بھی نہ کیاگیا تفصیلات کے مطابق پاپولیشن ویلفیئر کے ریگولر پراجیکٹ کے ملازمین کاچھ ماہ سے تنخواہیں بند ہیں جس سے ملازمین مالی مشکلات سے دوچار ہورہے ہیں اور ملازمین اپنے اہل وعیال کے ہمراہ فاقوں پر مجبور ہوگئے ہیں یہاں تک کہ پاپولیشن ویلفیئر خیبرپختونخوا کے پراجیکٹ ایف ڈبلیو سی کے ملازمین اپنے بچوں کی سکول فیس ادا نہ کرنے کی وجہ سے ان کے بچوں کو سکول سے نکالاجارہا ہے تنخواہوں سے محروم کئی ملازمین نے چیف جسٹس آف پاکستان ثاقب نثار وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا، صوبائی وزیر خزانہ تیمور سلیم جھگڑا اور دیگر بالا حکام سے مطالبہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ پاپولیشن ویلفیئر خیبرپختونخوا کے ایف ڈبلیو سی 100 کے ملازمین کی تنخواہوں کی اجراء کے احکامات جاری کرکے اس پراجیکٹ کے ملازمین اور ان کے بچوں کو فاقہ کشیوں اور خود کشیوں سے بچایا جائے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -