’’مدارس غیر سیاسی ہوتے ہیں‘‘جامعہ بنوریہ کراچی نے مولانا فضل الرحمان کو بڑا جھٹکا دے دیا

’’مدارس غیر سیاسی ہوتے ہیں‘‘جامعہ بنوریہ کراچی نے مولانا فضل الرحمان کو ...
’’مدارس غیر سیاسی ہوتے ہیں‘‘جامعہ بنوریہ کراچی نے مولانا فضل الرحمان کو بڑا جھٹکا دے دیا

  



اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)جامعہ بنوریہ کراچی کے مہتمم مفتی نعیم نے آزادی مارچ اور دھرنے میں مدارس کے طلبا بھیجنے کی مخالفت کرتے ہوئے کہا ہے کہ مدارس غیر سیاسی ہوتے ہیں، مدراس کے طلبا کسی مارچ،ریلی  یا دھرنے میں شریک ہوئے اور زخمی ہو گئےتو والدین اور دنیا  کو کیا پیغام جائے گا؟۔

تفصیلات کے مطابق مفتی نعیم نے ان خیالات کا اظہار وفاقی وزیربحری امورعلی زیدی اور وفاقی وزیر مذہبی امور پیر نورالحق قادری سے مدرسہ کے دورہ کے موقع پر گفتگو کے دوران کیا۔ انہوں نے مزید کہا کہ جامعہ بنوریہ  ملک کے بڑے اداروں میں سے ایک ہے ،جامعہ بنوریہ میں  53 ممالک کے طلبا پڑھتے ہیں، میرا یہ پیغام دنیا کے 53 ممالک میں جائے گا ،اگر طلبا سیاسی مقاصد کےلئے استعمال ہوئے تو ان ممالک کو کیا پیغام جائے گا؟۔انہوں نے کہا کہ میں نے  مُلک بھر کے مدارس کے سربراہان سے درخواست کی ہے کہ مدرسوں کے بچوں کو سیاسی مقاصد کے لیے استعمال کرنے سے گُریز کیا جائے اور مدارس کے بچوں کو دھرنے یا ریلی میں شریک نہ کیا جائے ،اگر دھرنے یا ریلی میں کسی مدرسے کا طالب علم زخمی ہوا تو  ادارہ بھی بدنام ہو گا دنیا بھر میں اس کا بڑا منفی پیغام جائے گا ۔

مزید : قومی