چارسدہ،سرکی سکول کا چوکیدار جنسی بد اخلاقی کرنے پر گرفتار

چارسدہ،سرکی سکول کا چوکیدار جنسی بد اخلاقی کرنے پر گرفتار

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

 
چارسدہ (بیورو رپورٹ) خانمائی پولیس کی بروقت کامیاب کاروائی۔سرکی میں سکول چوکیدار کے ہاتھوں 8 سالہ بچی کے ساتھ جنسی زیادتی کرنے والا شیطان صفت ملزم گرفتار۔ملزم کا اقرار جرم۔ تفصیلات کے مطابق ڈی ایس پی آیاز محمود خان نے میڈیا کو تفصیلات بتا تے ہوئے کہا کہ 18اکتوبر کو تھانہ خانمائی کے حدود میں سکول کے آٹھ سالہ بچی کے ساتھ سکول کے چوکیدار بلال اصغر ولد کریم خان ساکن سرکی نے اپنے گھر کے اندر جنسی زیادتی کی تھی جس کی رپورٹ تھانہ خانمائی میں درج کی گئی۔ واقعہ کے حوالے سے ڈی آئی جی محمد علی خان نے نوٹس لیتے ہوئے ڈی پی او چارسدہ عرفان اللہ خان کو ملزم کی فوری گرفتاری اور متاثرہ بچی کو قانونی مدد فراہم کرنے کی ہدایات جاری کر دئیے۔ ڈی پی او چارسدہ نے افسوسناک واقعہ کے حوالے سے ایس پی انوسٹی گیشن چارسدہ افتخار شاہ خان کی سربراہی میں تفتیشی اور اپریشنل ٹیمیں تشکیل دئیے جس میں وہ خود بھی شامل تھے جبکہ ٹیم میں ایس ایچ او تھانہ خانمائی بہرمند شاہ خان اور انوسٹی گیشن آفیسر سمیت دیگر ماہر پولیس افسران شامل تھے۔پولیس ٹیموں نے جدید سائنسی خطوط پر کاروائی کر تے ہوئے 12 گھنٹے کے اندر اندر ملزم بلال اصغر ولد کریم خان سکنہ سرکی تک رسائی حاصل کرتے ہوئے گرفتار کر لیا۔ڈی ایس پی آیاز محمود خان کے مطابق ابتدائی تفتیش کے دوران ملزم نے اقرار جرم کرتے ہوئے پولیس کو بتایا کہ متاثرہ بچی ان کے سکول میں پڑھتی ہے اور جمعہ کے روز چھٹی کے بعد انہو ں نے بچی کو ورغلا کر بہانے سے اپنے گھر لے گیا جہاں انہوں نے بچی کو جنسی زیادتی کا نشانہ بنایا۔ دوسری طرف آٹھ سالہ متاثرہ بچی ماریہ کے والد اور چچا نے پولیس کی کارکر دگی کو سراہتے ہوئے مطالبہ کیا کہ ملزم کو سخت سے سخت سزا دی جائے تاکہ آئندہ کوئی اس قسم کے قبیح فعل کا سو چ بھی نہ سکے۔