تحریک انصاف کی این اے 237کا نتیجہ روکنے کی درخواست مسترد

تحریک انصاف کی این اے 237کا نتیجہ روکنے کی درخواست مسترد
تحریک انصاف کی این اے 237کا نتیجہ روکنے کی درخواست مسترد

  

کراچی(ڈیلی پاکستان آن لائن)سندھ ہائیکورٹ میں تحریک انصاف کی این اے 237کا نتیجہ روکنے کی درخواست مستردکردی گئی ۔

نجی ٹی وی اے آر وائی نیوز کے مطابق وکیل پی ٹی آئی شہاب امام کی جانب سے درخواست میں موقف اختیار کیاگیاکہ این اے 237 میں بدترین دھاندلی کی گئی پی ٹی آئی کی ،عدالت نے ریمارکس دیتے ہوئے کہاکہ درخواست قابل سماعت نہیں، الیکشن ٹریبونل سے رجوع کریں ۔وکیل پی ٹی آئی نے کہاکہ الیکشن کمیشن نے اپنے دروازے ہی بند کر دیئے جب ہم درخواست لے کر گئے ،چیف جسٹس سندھ ہائیکورٹ نے کہاکہ بے ضابطگی یا دھاندلی ہوئی ہے تو آپ کے پاس الیکشن ٹریبونل جانے کا آپشن ہے ، وکیل پی ٹی آئی نے کہاکہ آئین کے آرٹیکل 225 کے تحت ہمیں دادرسی کیلئے رجوع کرنے کا حق ہے ،الیکشن ٹریبونل جانے کا آپشن الیکشن مکمل ہونے کے بعد ہے ،ہم الیکشن کمیشن گئے دروازہ نہیں کھولا گیا اس لئے یہاں آئے ،الیکشن کمیشن کو بے ضابطگی کے حوالے سے تین خطوط لکھے گئے ۔

چیف جسٹس سندھ ہائیکورٹ نے کہاکہ الیکشن کا کیا تنازعہ لے کر آئے ہیں یہ بتائیں ؟جوباتیں آپ بتا رہے ہیں وہ الیکشن تنازعہ کے زمرے میں آتا ہے،چیف جسٹس نے استفسار کیاکہ آپ الیکشن ٹریبونل گئے یا نہیں ۔وکیل پی ٹی آئی نے کہاکہ ہم الیکشن کمیشن گئے تھے شکایت لے کر دروازہ ہی نہیں کھولا گیا۔

مزید :

اہم خبریں -قومی -علاقائی -سندھ -کراچی -