ٹرین حادثے کے ذمہ داران کیخلاف سخت کارروائی کی جائیگی، سعد رفیق

ٹرین حادثے کے ذمہ داران کیخلاف سخت کارروائی کی جائیگی، سعد رفیق

  

لاہور(خبر نگار خصوصی)شجاع آباد اور شیر شاہ کے درمیان ٹرین حادثے کی ابتدائی رپورٹ وزارتِ ریلویز کو موصول ہوچکی ہے تاہم حتمی اورتفصیلی رپورٹ اگلے08 روز میں مکمل ہوجائے گی جس کے بعد حادثے کے ذمہ داران کے خلاف سخت تادیبی کارروائی عمل میں لائی جائے گی ۔اِن خیالات کا اظہاروزیر ریلویز خواجہ سعد رفیق نے ریلوے ہیڈکوارٹرزآفس لاہورمیں ٹرین حادثے سے متعلق اعلیٰ سطحی اجلاس کی صدارت کے دوران کیا۔ اجلاس میں حادثے سے متعلق مختلف پہلوؤں پر غور کیا گیا اورمستقبل میں اس قسم کے حادثات سے بچاؤکیلئے احتیاطی تدابیر کی حکمتِ عملی تیار کرنے کا جائزہ لیا گیا۔ وزیر ریلویز خواجہ سعد رفیق نے ملک بھر میں پاکستان ریلویز کے سٹیشنوں، پُلوں، سُرنگوں اور حساس تنصیبات کی سیکیورٹی کو جدید تقاضوں کے عین مطابق اور فول پروف بنانے کیلئے لائحہ عمل تیار کر کے رپورٹ آئندہ اجلاس میں پیش کرنے کی ہدایات جاری کیں۔ ریلوے سسٹم پر موجود ٹرینوں کی صفائی ستھرائی کیلئے قائم موجودہ واشنگ لائنوں کو جدید تقاضوں کے مطابق اَپ گریڈ کرنے کیلئے پلان مرتب کرنے کا کہاگیا۔جس کے تحت مسافر کوچز کم وقت میں مکمل طور پر صاف شفاف اورڈرائی کلین ہوسکیں گی۔اس سلسلے میں وزیر ریلویز خواجہ سعد رفیق نے شعبہ مکینکل کے افسران کوخصوصی طور پر ہدایات جاری کیں کہ وہ جدید میکینزم کو اپناتے ہوئے جدید ٹیکنالوجی سے ہم آہنگ لائحہ عمل تیار کر کے آئندہ اجلاس میں پیش کریں تاکہ عوام کو بہتر سہولیات کی فراہمی جلد ممکن بنائی جاسکے۔ اجلاس میں چیف ایگزیکٹو آفیسر محمد جاوید انور، ممبر فنانس غلام مصطفی،ایڈیشنل جنرل منیجر مکینکل لیاقت علی چغتائی ،انسپکٹر جنرل آف ریلویزپولیس منیر احمد چشتی، ڈی آئی جی آپریشنز جواد ڈوگر، ڈی آئی جی ہیڈکوارٹرز شارق جمال، سمیت ریلوے کے دیگر اعلیٰ حکام نے شرکت کی۔

مزید :

علاقائی -