پاناما لیکس، تحقیقات شروع نہ کرنے پر ہائی کورٹ کا نوٹس ،پراسیکیوٹر جنرل نیب طلب ،ایف بی آر ،الیکشن کمشن سے بھی جواب مانگ لیا

پاناما لیکس، تحقیقات شروع نہ کرنے پر ہائی کورٹ کا نوٹس ،پراسیکیوٹر جنرل نیب ...
پاناما لیکس، تحقیقات شروع نہ کرنے پر ہائی کورٹ کا نوٹس ،پراسیکیوٹر جنرل نیب طلب ،ایف بی آر ،الیکشن کمشن سے بھی جواب مانگ لیا

  

لاہور(نامہ نگارخصوصی )لاہور ہائیکوٹ کے جسٹس وقاص رﺅف مرزا نے پاناما لیکس میں شامل پاکستانیوں کے خلاف نیب کی طرف سے تحقیقات شروع نہ کرنے کا نوٹس لیتے ہوئے پراسکیوٹر جنرل پنجاب وقاص قدیر ڈار کو وضاحت کے لئے طلب کر لیاہے جبکہ ایف بی آر اور الیکشن کمشن سے بھی جواب طلب کرلیا ہے ۔گزشتہ روز پاکستان تحریک انصاف اور پاکستان عوام تحریک کی درخواستوںکی پیروی کے لئے کوئی وکیل عدالت میں پیش نہیں ہواتاہم ایک درخواست گزار شہری منیر احمد کی طرف سے اظہر صدیق ایڈووکیٹ نے موقف اختیار کیا کہ پانامالیکس میں وزیر اعظم نواز شریف سمیت دیگر افراد نے اربوں روپے کی کرپشن کی ہے، اس کرپشن کی تحقیقات کے لئے 25اپریل سے نیب کو درخواستیں دے رہے ہیں مگر نیب خاموش تماشائی کا کردار ادا کر رہا ہے، نیب کی طرف سے سرکاری وکیل نے موقف اختیار کیا کہ انہیں جواب داخل کرانے کے لئے مہلت دی جائے جس پر عدالت نے ریمارکس دیئے کہ حیرت کی بات ہے نیب نے ابھی تک اس معاملے پر تحقیقات شروع نہیں کی ہیں، بنچ نے قرار دیا کہ عدالتیں اپنا کام آئین اور قانون کے مطابق کرتی ہیں ، اداروں کو بھی اپنا کام ذمہ داری سے کرنا چاہیے، عدالت نے کیس کی سماعت 5اکتوبر تک ملتوی کرتے ہوئے پراسکیوٹر جنرل نیب وقاص قدیر ڈا ر کو وضاحت کے لئے طلب کر لیاہے، عدالت نے ایف بی آر اور الیکشن کمیشن کو بھی نوٹسز جاری کردیئے ہیں ۔

مزید :

لاہور -