او آئی سی کا انسانی حقوق کمیشن حقائق جاننے اور بھارتی مظالم کا جائزہ لینے مقبوضہ کشمیر جائے گا :طیب اردگان

او آئی سی کا انسانی حقوق کمیشن حقائق جاننے اور بھارتی مظالم کا جائزہ لینے ...
او آئی سی کا انسانی حقوق کمیشن حقائق جاننے اور بھارتی مظالم کا جائزہ لینے مقبوضہ کشمیر جائے گا :طیب اردگان

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک)ترک صدر طیب اردگان نے کہاہے کہ او آئی سی کا انسانی حقوق کمیشن حقائق جاننے اور بھارتی مظالم کا جائزہ لینے کیلئے مقبوضہ کشمیر جائے گا ، ’پاکستان اور ترکی یکجان اور دو قالب ہیں ،ہمارا جینا مرنا آپ کے ساتھ اور آپ کا جینا مرنا ہمارے ساتھ ہے‘۔

اقوام متحدہ کے جنرل اسمبلی کے 71ویں اجلاس کے موقع پر وزیراعظم نوازشریف اور طیب اردگان کے درمیان ترکی میں ناکام بغاوت کے بعد پہلی ملاقات ہوئی جس دوران مشیر خارجہ سرتاج عزیز اور معاون خصوصی طارق فاطمی نے بھی شرکت کی ۔ملاقات میں دونوں رہنماﺅں نے جنوبی ایشیا ،مشرق وسطیٰ جبکہ بالخصوص شام اور عراق کی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا ۔وزیراعظم نوازشریف نے ملاقات میں ترک صدر کو مقبوضہ کشمیر میں بھارت کے ظلم و بربریت سے آ گاہ کیا جس پر طیب اردگان نے نوازشریف کوخوشخبری سناتے ہوئے کہا کہ او آئی سی کا انسانی حقوق کمیشن حقائق جاننے اور بھارتی مظالم کا جائزہ لینے کیلئے مقبوضہ کشمیر جائے گا ۔

اقوامی متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اجلاس میں امریکی صدر اوباما کا آخری خطاب پڑھنے کیلئے یہاں کلک کریں

وزیراعظم نوازشریف نے اہم امور پر ترکی کی مکمل حمایت کا اعادہ کرتے ہوےءکہا کہ نیوکلیئر سپلائیرز گروپ میں ترکی کے تعمیری کردار پر مشکور ہیں ،دوطرفہ تعلقات کو فروغ دینے میں اعلیٰ سطح تزویراتی کونسل کاکرداراہمیت کا حامل ہے ۔نوازشریف نے پاکستان میں مختلف شعبوں میں ترک کمپنیوں کی خدمات کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ ترک کمپنیاں پاکستان میں سرمایہ کاری کے بھر پور مواقعوں سے فائدہ اٹھائیں ۔ان کا کہناتھا کہ پاکستان اور ترکی کے درمیان آزاد تجارتی معاہدے کو جلد حتمی شکل دی جائے گی ،آزاد تجارت کے معاہدے سے دو طرفہ تجارتی حجم میں مزید اضافہ ہو گا ۔وزیراعظم نوازشریف نے ترکی میں حالیہ بم  دھماکوں کی شدید مزمت بھی کی ۔

اس موقع پر ترک صدر نے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ’پاکستان اور ترکی یکجان اور دو قالب ہیں ،ہمارا جینا مرنا آپ کے ساتھ اور آپ کا جینا مرنا ہمارے ساتھ ہے‘

مزید :

قومی -اہم خبریں -