سیاسی مداخلت ‘ تعلیمی افسروں اور پرنسپلز کیلئے کام کرنا مشکل ہوگیا

سیاسی مداخلت ‘ تعلیمی افسروں اور پرنسپلز کیلئے کام کرنا مشکل ہوگیا

ملتان(خصوصی رپورٹر) سیاسی افراد کی مداخلت محکمہ تعلیم میں کام کرنا مشکل ہوگیا بتایا گیا ہے کہ ارکان اسمبلی کی بے جا مداخلت نے افسروں کا پرنسپلوں کاکام کرنامشکل کردیا اساتذہ کی (بقیہ نمبر48صفحہ12پر )

طرف سے نا پڑھانے اور ناقص کاکردگی اور نتائج پر پوچھ گچھ پر یہ افراد سامنے ا?جاتے ہیں اور کارروائی رکوادیتے ہیں جس کی مثال جھوک لشکر وینس کے سکول کی ہے جس کی ایک انکوائر ی کے مطابق چار اساتذہ کو تبدیل نہ کیا جاسکا، جس کی وجہ سے کام چور اساتذہ سکولوں کے سربراہوں کے لئے عذاب بن کر رہ گئے ہیں ، اس بارے میں سینئر ٹیچر رانا ولایت علی نے کہا ہے کہ اچھی کارکردگی کا سارا بوجھ پرنسپل پر ہے مگر اس کو ساز گار ماحول نہیں دیا جارہا ہے افسروں کو خراب کارکردگی والے اساتذہ کے خلا ف براہ راست کارروائی کرنی چاہیے، سیاسی مداخلت نے سارا نظام برباد کردیا ، اگر سکول سیاسی افراد نے چلانے ہیں تو ہیڈماسٹروں کو ضلع کیدفتر میں بیٹھا دیں اور الیکشن کے بعد ان کو دوبارہ تعینات کردیں ان کا کہنا ہیکہ افسر تو ان کے ساتھ ہیں مگر اس کے باوجود ان کے مسائل ختم نہیں ہورہے ہیں ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر