مولانا فضل الرحمن کشمیرکمیٹی کے فنڈ اوراقتدار کی ہوس دل سے نکال کرکشمیریوں کی محبت دل میں بسائیں:میاں اسلم اقبال

مولانا فضل الرحمن کشمیرکمیٹی کے فنڈ اوراقتدار کی ہوس دل سے نکال کرکشمیریوں ...
مولانا فضل الرحمن کشمیرکمیٹی کے فنڈ اوراقتدار کی ہوس دل سے نکال کرکشمیریوں کی محبت دل میں بسائیں:میاں اسلم اقبال

  


لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)صوبائی وزیراطلاعات وثقافت پنجاب  میاں اسلم اقبال نےکہاہےکہ لوٹ کھسوٹ میں ریکارڈ بنانےوالے بلاامتیازاحتساب کے عمل پربلاجوازواویلا کر رہے ہیں،مولانا فضل الرحمن کشمیرکمیٹی کے فنڈ اوراقتدار کی ہوس دل سے نکال کرکشمیریوں کی محبت دل میں بسائیں،کوئی بھی معاشرہ اس وقت تک کسی مسئلے پر قابو نہیں پا سکتاجب تک معاشرے کے تمام افراد اس میں کردار ادا نہ کریں،ڈینگی بھی ایک معاشرتی مسئلہ ہے اور ہمیں مل کر اس کے خلاف لڑناہے اوراسے شکست دینا ہے۔

 گورنمنٹ پوسٹ گریجویٹ کالج برائے خواتین سمن آباد میں ’انسداد ڈینگی سیمینار‘ سے خطاب کرتے ہوئے میاں اسلم اقبال نے  کہا کہ ڈینگی سے ڈرنا نہیں بلکہ اس کے ساتھ لڑنا ہے اور اس پر قابو پانا ہے،ڈینگی کی وبا ء پر قابو پانے کے لئے بھرپور آگاہی کی ضرورت ہے،حکومت اور معاشرے کے تمام طبقات مل کر ڈینگی کے مسئلے پر قابوپا سکتے ہیں،ڈینگی مچھر صاف پانی میں پیدا ہوتا ہے ہمیں اپنے گھروں،محلوں،دکانوں اور دفاتر کو صاف ستھرا رکھنا ہے اوراس بات کو یقینی بنانا ہے کہ کہیں پانی کھڑا نہ ہو۔انہوں نے کہا کہ اسلام میں صفائی کو نصف ایمان قرار دیا ہے،اس لئے ہمیں صفائی وستھرائی پر بھرپور توجہ دینی چاہیے،ڈینگی کے حوالے سے تمام ذمہ داری حکومت پر نہیں ڈالی جا سکتی،سب کو مل کر ڈینگی کی وبا ء پر قابو پانا ہے ۔

صوبائی وزیر میاں اسلم اقبال  نے میڈیا کے نمائندوں سے گفتگو کرتےہوئےکہاکہ لوٹ کھسوٹ میں ریکارڈ بنانے والے بلا امتیازاحتساب کے عمل پربلاجوازواویلا کررہے ہیں،کرپٹ عناصر سے لوٹی ہوئی دولت کی واپسی ہرپاکستانی کے دل کی آواز ہے،قومی دولت لوٹنے والوں کو ہرقیمت پر حساب دینا ہو گا،اپوزیشن اپنے کرپٹ لیڈروں کو بچانے کی بجائے نہتے کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کے لئے باہر نکلے،مولانا فضل الرحمن کشمیرکمیٹی کے فنڈ اوراقتدار کی ہوس کودل سے نکال کرکشمیریوں کی محبت دل میں بسائیں،کیا ہی اچھا ہوتا کہ مولانا کرپٹ عناصر کی خاطر آزادی مارچ کرنے کی بجائے کشمیریوں کے لئے آزادی مارچ کرتے۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور


loading...