شو آف پاور،روس میں کثیر ملکی فوجی مشقیں،پاکستان اور چین کی طاقت دیکھ کر بھارت بھاگ گیا

شو آف پاور،روس میں کثیر ملکی فوجی مشقیں،پاکستان اور چین کی طاقت دیکھ کر ...

  

 راولپنڈی (مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان آرمڈ فورسز کے دستے نے روس میں ہونیوالی فوجی مشقوں ’کیوکاز‘ کی افتتاحی تقریب میں شرکت کی۔آئی ایس پی آر کے ڈائریکٹر جنرل میجر جنرل بابر افتخارنے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر ایک ویڈیو جاری کی جس میں دیکھا جا سکتا ہے کہ پاکستان آرمڈ فورسز کا دستہ روس میں ہونیوالی فوجی مشقوں کیوکاز کی افتتاحی تقریب میں شریک ہے۔میجر جنرل بابر افتخار نے لکھا کہ روس میں ہونیوالی مشقوں کا مقصد ایک دوسرے کے تجربات سے استفادہ کرنا ہے۔ فوجی مشقیں 21 سے 26 ستمبرتک جاری رہیں گی۔ مشقیں روس کے علاقے استرکھان میں منعقدہورہی ہیں۔بھارت ان فوجی مشقوں میں شرکت سے آخری وقت میں بھاگ گیاکیونکہ بالی ووڈ کے سورما فوجی صلاحیتوں کے عملی مظاہرے سے گریزاں ہیں۔ دفاعی ماہرین نے بھارتی فیصلہ بچگانہ اور تنگ نظری قرار دیتے ہوئے کہا کہ بھارت مشقوں سے پاکستان اور چین کی موجودگی کی وجہ سے بھاگا۔بھارت کی طرف سے اگست تک ان مشقوں میں شرکت کی مکمل تیاری تھی، چین کیساتھ سرحدی تنازع پر بھارت پیچھے ہٹا۔ تربیتی مشقوں میں حربی اور تربیتی مظاہرے شامل ہیں، شرکاء کو اپنے جدید ملٹری ہارڈ وئیر اور ٹیکنالوجی کے مظاہرے کا موقع ملے گا۔ پاکستان نے گزشتہ سال اسی سلسلے کی ٹی سنٹر 2019ء میں بھرپور شرکت کی تھی۔ پاکستان سمیت قازقستان، کرغزستان، تاجکستان اور ازبکستان شریک ہوئے تھے۔ کیوکاز مشقوں میں خطے کے دیگر ممالک کو بھی شرکت کی دعوت دی گئی ہے۔ کیوکاز سٹریٹجک کمانڈ مشقوں میں 80ہزار سے زائد اہلکاروں کی شرکت متوقع ہے۔پاک روس مشترکہ فوجی مشقیں دروزبہ بھی ہر سال منعقد ہوتی ہیں۔ دروزبہ دوستی کے ٹائٹل سے مشقیں 2016ء سے شروع ہوئیں، اب تک دروزبہ کے سلسلے کی چار فوجی مشقیں ہوچکی ہیں، ان مشقوں میں انسداد دہشت گردی اور سپیشل آپریشنز کے پہلو شامل ہیں۔

بھارت بھگوڑا

مزید :

صفحہ اول -