بلاول بھٹو کی مولانا فضل الرحمٰن سے ملاقات،اے پی سی،اہم امور پر تبادلہ خیال

بلاول بھٹو کی مولانا فضل الرحمٰن سے ملاقات،اے پی سی،اہم امور پر تبادلہ خیال

  

 اسلام اباد (سٹاف رپورٹر، مانیٹرنگ ڈیسک) چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری نے مولانا فضل الرحمان سے ملاقات کی۔جس میں اپوزیشن کی کثیر الجماعتی کانفرنس کے ایجنڈ ے سمیت اہم امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔تفصیلات کے مطابق چیئر مین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری مولانا فضل الرحمان کے گھر پہنچ گئے۔ ڈیڑھ گھنٹے کی طویل ملاقات ہوئی۔ اپوزیشن کی کثیر الجماعتی کانفرنس کے حوالے سے تبادلہ خیال کیا گیا۔چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کے ہمراہ یوسف رضا گیلانی اور راجہ پرویز اشرف بھی موجود تھے جبکہ مولانا فضل ا لرحمان کی جانب سے مولانا عطاالرحمان، اکرم خان درانی اور اویس نورانی شریک ہوئے۔ملاقات کے بعد میڈیا سے مختصر گفتگو میں بلاول بھٹو زرداری نے کہا مولانا فضل الر حمان سے خو شگوار ماحول میں ملاقات ہوئی۔اے پی سی کے بعد اپوزیشن کا متفقہ لائحہ عمل سامنے آے گا۔کیا وزیراعظم، سپیکر اور وزیراعلیٰ پنجاب کیخلاف تحریک عدم اعتماد کا آپشن زیر غور ہے؟ صحافی کے سوال پر بلاول بھٹو نے کہا اس پر آپ کو کانفرنس کے بعد آگاہ کریں گے۔قبل ازیں اپنے ایک بیان میں چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے گلگت بلتستان میں شفاف انتخابات نہ ہونے کو سب سے بڑا نیشنل سکیورٹی رسک قرار دیا۔ ترجمان کے مطابق چیئرمین پی پی پی بلاول بھٹو زرداری نے کہا گلگت بلتستان میں فیئر اینڈ فری الیکشن نہ ہونا ملک کیلئے ایک بڑا نیشنل سکیورٹی رسک ثابت ہوسکتا ہے، انہوں نے گلگت بلتستان میں اپنی پارٹی کو بھرپور الیکشن مہم چلانے کی ہدایت کردی، چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے پارٹی رہنماؤں کو ہدایت جاری کرتے ہوئے کہا کہ گلگت بلتستان کے الیکشن جیت کر آپ نے بھٹو شہید اور بی بی شہید کے مشن کو پورا کرنا ہے، انہوں نے ہدایت کی کہ گلگت بلتستان کے جیالے گھر گھر جائیں اور بھٹو شہید کے پیغام کو عوام میں پہنچائیں۔

بلاول ملاقات

مزید :

صفحہ اول -