ہماری سیاست عوام کی نظر یاتی تشخص کو بچانے کیلئے ہے،مولانا حامد الحق حقانی

  ہماری سیاست عوام کی نظر یاتی تشخص کو بچانے کیلئے ہے،مولانا حامد الحق حقانی

  

پبی (نما ئندہ پاکستان)جمعیت علمائے اسلام اوردفاع پاکستان کونسل کے سربراہ مولانا حامد الحق حقانی نے کہاکہ ہماری سیاست چند سیاستدانوں کو بچانے کے لئے نہیں بلکہ پاکستان کی 22 کروڑ عوام کی نظریاتی تشخص کو بچانے کیلئے ہے، ان خیالات کا اظہار انہوں نے دارالعلوم اسلامیہ اضاخیل بالا نوشہرہ میں جمعیت علماء  اسلام کی صوبائی مجلس عمومی کے اجلاس سے بطورمہمان خصوصی خطاب کرتے ہوئے کیا، اجلاس کی صدارت جمعیت کے پی کے کے صوبائی امیر مولانا سید محمد یوسف شاہ نے کی جبکہ جمعیت شمالی پنجاب کے امیر مولانا صاحبزادہ عبدالقدوس نقشبندی نے بطور خاص شرکت کی، مولانا حامد الحق نے کہاکہ ہماری سیاست کا اولین ہدف ملک میں مکمل اسلامی انقلاب ہے ہم مکہ اور مدینہ کی سیاست کرنا چاہتے ہیں، انہوں نے کہاکہ پاکستان کی سڑکوں اور شاہراہوں پر روز روز عصمت دری کے واقعات پر انسانی حقوق کے علمبرداروں کی خاموشی معنی خیز ہے؟مولانا صاحبزادہ عبدالقدوس نقشبندی نے اپنے خطاب میں مولانا سمیع الحق شہید کے دینی، علمی،سیاسی جہادی اور علمی خدمات تفصیلی روشنی ڈال کر ان کو خراج تحسین پیش کیا اوران کے مشن اورنظریہ کوپاکستان غیور عوام تک پہنچانے کیلئے کارکنوں پر زور دیا، انہوں نے کہاکہ ہم مولانا سمیع الحق شہید کے قاتلوں کی گرفتاری تک امن سے نہیں بیٹھیں گے،اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے مولانا سیدمحمد یوسف شاہ نے کہاکہ قادیانیوں کو کافر قرار دیتے ہیں،دوسرے اکابر کے ساتھ مولانا سمیع الحق شہید کا کردار سنہری حروف سے لکھا جائے گا، ان کو شہید کرنے کے بعد طرح طرح کے فتنوں نے سراٹھانا شروع کردیا ہے،کارکن جماعت کو منظم کریں،قریہ قریہ تنظیم سازی کریں،اجلاس میں یہ فیصلہ کیا گیا کہ نومبر کے مہینہ میں چاروں صوبوں اور اسلام آباد میں خدمات مولانا سمیع الحق شہید کانفرنسوں کا انعقاد کیا جائے گا، اس سے پہلے صوبائی قائدین صوبہ کے تمام اضلاع کا دورہ کریں گے، اجلاس میں مالیاتی نظام کیلئے جمعیت کے سرپرست اعلیٰ مولانا عبدالواحد کی سرپرستی میں مولانا سبز علی خان،مولانا محمد اسرائیل اور مولانا عبدالحئی پر مشتمل کمیٹی بنائی گئی،اجلاس میں صوبہ بھر کے اراکین عمومی نے شرکت اور جماعت کو منظم اورفعال بنانے پر غوروحوض کیا۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -