وزیر اعلیٰ کراچی میں بڑھتی ہوئی بد امنی کا نوٹس لیں،خرم شیرزمان  

 وزیر اعلیٰ کراچی میں بڑھتی ہوئی بد امنی کا نوٹس لیں،خرم شیرزمان  

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر)پاکستان تحریک انصاف کراچی کے صدر و رکن سندھ اسمبلی خرم شیر زما ن نے شہر قائد میں امن و امان کی بگڑتی ہو ئی صورتحال پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ شہر میں ڈکیتی اور راہزنی کی وارداتیں حد سے تجاوز کر گئی ہیں، شہر کے مختلف علاقوں میں کرائم ریٹ میں تیزی سے اضافہ ہورہا ہے۔ صوبائی حکومت شہریوں کو تحفظ فراہم کرنے میں مکمل طور پر ناکام ہے۔اسٹریٹ کرائمز کے دوران اکثر شہری مذاحمت پر اپنی جان سے ہاتھ دھو بیٹھتے ہیں۔حال ہی میں ڈکیتی کے دوران مزاحمت پر قتل ہونے کے کئی واقعات سامنے آچکے ہیں جس کے باوجود کوئی ایکشن نہیں لیا گیا۔ انصاف ہاوس سے جاری کردہ بیان میں خرم شیر زمان کا مزید کہنا تھا کہ محکمہ داخلہ سندھ اور پولیس شہریوں کو تحفظ فراہم کرنے میں ناکام ہیں، کراچی کے شہری اپنے آپ کو غیر محفوظ سمجھتے ہیں۔ جب رینجرز شہر میں امن قائم کر سکتی ہے تو سندھ حکومت نے پولیس کو اس قابل کیوں نہیں بنایا کہ وہ شہریوں کا تحفظ یقینی بنا سکیں۔ خرم شیر زمان کا مزید کہنا تھا کہ شہر میں بچوں کے اغوا ہونے کے واقعات میں بھی اضافہ تشویشناک ہے۔ حال ہی میں ننھی مرواہ کے ساتھ پیش آنے والے واقعے نے شہریوں کوخوف میں مبتلا کردیا تھا۔عوام کے جان و مال کا تحفظ کی ذمہ داری صوبائی حکومت کی ہے۔ شہر کا بگڑتا ہوا امن شہر کی ترقی میں بھی رکاوٹ کا سبب بنے گا۔ کراچی کے شہریوں نے بہت برا وقت دیکھا ہے، انہیں واپس ان حالات میں دھکیلنے نہیں دیں گے۔ ہم وزیر اعلیٰ سندھ جو کہ صوبے کے وزیر داخلہ بھی ہیں سے مطالبہ کرتے ہیں کہ شہر میں بڑھتی ہوئی بد امنی کا نوٹس لیں۔آئی جی سندھ شہر میں پولیس پیٹرولنگ اور جگہ جگہ اسنیپ چیکنگ میں اضافہ کریں۔ 

مزید :

صفحہ آخر -