انتظامیہ غائب‘ ٹماٹر‘ ادرک‘ پیاز اور دیگر سبزیاں مزید مہنگی

انتظامیہ غائب‘ ٹماٹر‘ ادرک‘ پیاز اور دیگر سبزیاں مزید مہنگی

  

ملتان (نیوز رپورٹر) ضلعی انتظامیہ و مارکیٹ کمیٹی کی ناقص منصوبہ بندی کے باعث ٹماٹر، ادرک، پیاز و دیگر سبزیوں کی قیمتیں آسمان سے باتیں کرنے لگیں، ایک ماہ کے دوران سبزیوں کی دوگنا و سہہ گنا بڑھتی قیمتوں نے صارفین کی مشکلات میں مزید اضافہ کردیا ہے مارکیٹ ذرائع کے مطابق پیاز فی کلو 28 روپے کلو سے بڑھ کر 50 روپے آلو نمکین 40 روپے کلو سے(بقیہ نمبر2صفحہ 6پر)

 بڑھ کر 60 روپے ٹماٹر 40 روپے سے بڑھ کر 100 روپے ادرک 280 روپے کلو سے بڑھ کر 600 روپے لہسن 140 روپے سے بڑھ کر 180 روپے کریلا 60 روپے سے بڑھ کر 160 روپے مٹر 130 روپے کلو سے بڑھ کر 240 روپے بھنڈی 60 روپے سے بڑھ کر 100 روپے ہری دھنیاں 70 روپے کلو سے بڑھ کر 160 روپے ہری مرچ 52 روپے کلو سے بڑھ کر 100 روپے کی سطح تک جا پہنچی ہے۔ اشیائے خورونوش کی قیمتوں میں اچانک تیزی آنے پر پہلے سے مہنگائی و گرانفروشی سے پریشان متوسط طبقے سے تعلق رکھنے والوں کی رہی سہی کسر سبزیوں کی بڑھتی قیمتوں نے پوری کردی ہے صارفین کے مطابق ضلعی انتظامیہ اور مارکیٹ کمیٹی شہر کی ضروریات سے لاعلم ہونے اور پرائس کنٹرول مجسٹریٹس کے غیر فعال ہونے کے باعث طلب و رسد کو بیلینس کرنے اور قیمتوں میں استحکام لانے میں مکمل طور پر ناکام نظر آتی ہے جس کا خمیازہ صارفین کو بھگتنا پڑرہا ہے۔ 

مزید مہنگی

مزید :

ملتان صفحہ آخر -