احتساب کا سن کر سب چور ایک ساتھ بیٹھ گئے ، نواز شریف صحت مند ہیں تو واپس آکر اپنے کیسز کا سامنا کریں،حلیم عادل شیخ کا مطالبہ

احتساب کا سن کر سب چور ایک ساتھ بیٹھ گئے ، نواز شریف صحت مند ہیں تو واپس آکر ...
احتساب کا سن کر سب چور ایک ساتھ بیٹھ گئے ، نواز شریف صحت مند ہیں تو واپس آکر اپنے کیسز کا سامنا کریں،حلیم عادل شیخ کا مطالبہ

  

کراچی(ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان تحریک انصاف کے مرکزی رہنما حلیم عادل شیخ نے کہا ہے کہ آج پھر ملزمان اور سزایافتہ لوگوں کا گٹھ جوڑ اے پی سی کی شکل میں نظر آیا، احتساب کا سن کر سب چور ایک ساتھ بیٹھ گئے ہیں، نواز شریف صحت مند ہیں تو ملک آکر اپنے کیسز کا سامنا کریں، وہ بیماری کا بہانہ اور قوم سے منہ چھپا کر لندن کی گلیوں میں پھرتے دکھائی دیتے رہے لیکن واپس نہیں آئے۔

نجی ٹی وی کے مطابق اپوزیشن کی اے پی سی پر ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے سندھ اسمبلی میں تحریک انصاف کے پارلیمانی لیڈر حلیم عادل شیخ نے کہا کہ ایف اے ٹی اے کے قانون پاس ہونے پر چوروں کو تکلیف ہورہی ہے، اگر یہ منی لانڈرنگ نہیں کر تے تو قانون کی مخالفت کیوں کی گئی؟ساری زندگی پیپلز پارٹی اور ن لیگ نے ملک و قوم کو لوٹا ہے، ان کے منہ سے قوم کی اچھائی کی باتیں اچھی نہیں لگتیں، احتساب کا سن کر سب چور ایک ساتھ بیٹھ گئے ہیں۔انہوں نے کہا کہ نواز شریف ایک سزایافتہ ملزم ہیں جن کو پاکستان کی اعلیٰ عدلیہ نے ناہل قرار دیا ہے جبکہ عمران خان کو پاکستان کی عدلیہ صادق اور امین قرار دیا ہے، عمران خان کو پاکستانی قوم نے ووٹ کے ذریعے منتخب کیا، پاکستان اس وقت ترقی کر رہااور عالمی سطح  پر پاکستان مورال بحال ہورہا ہے،ان چوروں کی تحریکوں سے کچھ نہیں ہوگا ۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان کی قوم ان کو جان چکی ہے ،بیماری کا بہانہ بنا کر نواز شریف لندن میں جبکہ آصف زرداری کراچی میں ہیں، قوم اب لٹیروں کی باتوں میں نہیں آئے گی،حکومت اس وقت مضبوط ہے،احتساب کا عمل جوں ہی تیز ہوتا ہے ان چوروں کو اے  پی سی یاد آجاتی ہے۔ 

مزید :

علاقائی -سندھ -کراچی -