فلپائن‘ مورو امن معاہدہ سے 45 سالہ جنگ کا خاتمہ

فلپائن‘ مورو امن معاہدہ سے 45 سالہ جنگ کا خاتمہ

  

منیلا(آن لائن) فلپائن‘ مورو امن معاہدہ سے 45 سالہ جنگ کا خاتمہ ہوگیا ہے اور مبصرین قراردے رہے ہیں کہ طالبان سے مذاکرات مخالف حلقوں کیلئے ایک مثال ہے۔ 1963ءمیں برطانیہ نے انیسویں صدر سے زیر قبضہ قدرتی وسائل سے مالامالک مسلم علاقے صباح کو فیڈریشن آف ملائیشیاءکا حصہ بنادیا۔ فلپائن نے اس پر احتجاج کیا کہ یہ علاقہ سولو سلطنت اور اضافی طور پر فلپائن کا حصہ تھا اور وہاں کے گروہوں کو اکساکر مسلح کارروائیوں کے یونٹ ترتیب دئیے۔ اس کانام آپریشن آزادی رکھا گیا۔ فلپائن حکومت اور مورو مسلمانوں کے درمیان 1970ءمیں شدید لڑائی کے بعد امن کوششوں کا آغاز ہوا۔ صدر فیڈرل راموس کے دور میں 1996ءمیں حتمی امن معاہدہ ہوا۔ سیاسی تجزیہ نگار کہتے ہیں کہ اگر فلپائن میں 45 سال بعد امن معاہدہ ہوسکتا ہے تو طالبان سے بھی مذاکرات کیلئے معاہدہ کیا جاسکتا ہے۔

مزید :

عالمی منظر -